رتلام ضلع کی تمام ملحقہ سرحدیں مکمل طور پر بند،گھرسے باہرنکلنے پربھی پابندی

رتلام ضلع کی تمام ملحقہ سرحدیں مکمل طور پر بند،گھرسے باہرنکلنے پربھی پابندی
بھوپال/رتلام:31مارچ(نیانظریہ بیورو)مدھیہ پردیش کارتلام ضلع 31 مارچ کو مکمل طور پر بند کردیا گیا ۔ جس کی وجہ سے انتظامیہ کی بھی سختی سے پیروی کی گئی ہے۔ اسی کے ساتھ ضلع کی تمام حدود کو بھی سیل کردیا گیا ہے۔دراصل 31 مارچ کو ریاست اور اس کے سرحدی اضلاع ا±جین اور بنسوارہ میں کورونا کے نئے معاملے سامنے آنے کی اطلاع ملنے کے بعد ضلع انتظامیہ نے مکمل لاک ڈاو¿ن کے احکامات جاری کیے تھے۔ اس دوران شہر کی منتخب دوائیوں اور دودھ کی دکانوں کے علاوہ تمام دکانیں بند کردی گئیں۔ وہیں عام لوگوں کو بھی گھروں کے اندر ہی رہتے اور مکمل لاک ڈاو¿ن کی پیروی کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔ ریاست میں کورونا کے بڑھتے مسلسل اضافے کے پیش نظر ، ضلع میں مکمل لاک ڈاو¿ن کی مدت میں بھی توسیع کی جاسکتی ہے۔واضح رہے اندور میں کورونا کی متاثرہ افراد کی بڑھتی ہوئی تعداد کے پیش نظر ضلع انتظامیہ اور محکمہ صحت پوری طرح چوکس ہے اور وہ لاک ڈاو¿ن کی سختی سے پیروی کرانے میں مصروف ہےں۔انتظامیہ کاکہنا ہے کہ اس وقت ملک کافی دشوارکن حالات میں ہے،لہذا عام لوگوں سے اپیل ہے کہ وہ اپنے گھروں میں ہی رہیں تاکہ کورونا کوپھیلنے سے روکاجاسکے۔