شراب تاجروں کا احتجاج: لاک ڈاون کے دوران حکومت نے دکانیں کھولنے کے احکامات جاری کئے


بھوپال:4مئی(نیانظریہ بیورو)
راجدھانی بھوپال میں بروز پیرانتظامیہ افسران کے ساتھ ریاست کے شراب کاروباریوںکی ایک میٹنگ ہونی تھی ، لیکن اس سے قبل حکومت نے شراب کی دکانیں کھولنے کے احکامات جاری کردیئے ۔ اس کی وجہ سے ، شراب تاجروں نے پیر کو ایک میٹنگ کی اور اس میں فیصلہ کیا کہ لاک ڈاو¿ن کے دوران مدھیہ پردیش میں شراب کی دکانیں نہیں کھولی جائیں گی۔معلوم ہوکہ لاک ڈاو¿ن 3 شروع ہوتے ہی شراب کی دکانیں حکومت نے گرین زون میں کھولنے کے احکامات جاری کیے ، لیکن ریڈ زون میں دکانیں کھولنے کے اجازت نہیں دی گئی ہے۔
اس کی وجہ سے کیاانکار :
شراب فروشوں کا کہنا تھا کہ انسانی نقطہ¿ نظرسے شراب کی دکانیں نہیں کھولیں گے۔ تاجروں نے بتایا کہ لاک ڈاو¿ن کے دوران محکمہ کے سارے اہلکار اپنی ڈیوٹی پر تعینات ہیں ،ایسے حالات میں وہ عوام کے مفاد میں اپنی خدمات دیں گے یاشراب کی دکانوں کی نگرانی کریں گے۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ ہم پوری ریاست میں کہیں بھی دکانیں نہیں کھولیں گے۔
عدالت جانے کا انتباہ:
غورطلب ہے کہ شراب تاجروں نے حکومت کی لائسنس پالیسی پر یہ بھی کہا کہ اس بار ان کی لائسنس کی پالیسی ہمارے مفاد میں نہیں ہے اور ان کا کہنا تھا کہ اگر حکومت اور محکمہ زبردستی دکانیں کھلواتا ہے تو ہم عدالت جائیں گے اور عدالت فیصلہ کرے گی کہ ہمارے لئے کیابہتر ہے۔ لیکن ہم ابھی لاک ڈاو¿ن کے دوران دکان نہیں کھولیں گے۔