کورونا ٹیسٹنگ لیب کی تعداد میں اضافہ:

کورونا ٹیسٹنگ لیب کی تعداد میں اضافہ:
ریاست میں اب نجی میڈیکل کالجوں میں بھی ہوئی جانچ شروع
بھوپال:23اپریل(نیانظریہ بیورو)
مدھیہ پردیش کے نجی میڈیکل کالجوں میں بھی کووڈ19 کی جانچ شروع ہوگئی ہے۔ آئی سی ایم آر کو نجی میڈیکل کالج میں کووڈ19 اور جانچ کے لئے اندور کی ایک تشخیصی لیب کو منظوری دے دی گئی ہے۔ اس کے بعد ریاست میں ٹیسٹنگ لیبز کی تعداد 12 ہوگئی ہے۔ ریاست میں اس وقت آزمائشی صلاحیت زیادہ سے زیادہ 150 ہے۔بتایاجاتاہے کہ کورونا انفیکشن کے بڑھتے ہوئے معاملات کے پیش نظر ، حکومت ریاست میں جانچ کی صلاحیت کو بڑھانے کے لئے مستقل کوشش کر رہی ہے۔ اس کے لئے ، ریاست کے میڈیکل کالجوں میں جانچ کے لئے درکار تمام وسائل حاصل کرنے اور انہیں آئی سی ایم آر میں اندراج کروانے کی کوشش کی جارہی ہے۔ اب تک ریاست میں دس ٹیسٹنگ لیبز میں نمونوں کی جانچ کی جارہی تھی۔اسی کے ساتھ دو دیگر لیبز میں بھی جانچ شروع ہوگئی ہے۔ آئی سی ایم آر کی سفارش موصول ہونے کے بعد اندورن میڈیکل کالج ، اندور اور پوری سوڈانی تشخیصی لیب میں بھی جانچ شروع ہوگئی ہے۔ پرنسپل سیکریٹری ، میڈیکل ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کے سنجے شکلا کے مطابق ریاست میں ٹیسٹنگ لیبز کی تعداد بڑھانے کے لئے مسلسل کوششیں کی جارہی ہیں۔
اس کے لئے میڈیکل کالجوں کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ جانچ کے لئے ضروری وسائل اور اپنی جانچ کی صلاحیت کو بڑھائیں اور جلد سے جلد ضروری گائیڈ لائنز کو مکمل کرکے ان کی اجازت آئی سی ایم آر سے حاصل کریں۔ اروندو میڈیکل کالج اندور اور پوری سوڈانی کے بعد اب رتلام میڈیکل کالج اور انڈیکس میڈیکل کالج اندور کو بھی ضروری وسائل اکٹھا کرنے کی ہدایت کی گئی ہے۔
غورطلب ہے کہ جلد ہینصف درجن میڈیکل کالجوں میں ایک ٹیسٹنگ لیب شروع ہوجائے گی۔ بھوپال میں چار لیبوں میں کرونا نمونہ کی جانچ کی جارہی ہے۔ ایمس بھوپال کے علاوہ ، کووڈ19 کا گاندھی میڈیکل کالج ، بی ایم ایچ آر سی اور آنند نگر میں واقع نیشنل ہائی سیکیورٹی ویٹرنری انسٹی ٹیوٹ میں بھی تجربہ کیا جارہا ہے۔ کمشنر میڈیکل ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نشانت وروڑے کا کہنا ہے کہ وزیر اعلی کی ہدایت پر ریاست میں جانچ کی گنجائش کو سات ہزار کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔