مذہبی جذبات بھڑکا کر ملک اپنی سیاست برقرار رکھنا چاہتی ہے بی جے پی: گووند سنگھ

بھوپال:02جنوری(نیانظریہ بیورو)
راشٹریہ سویم سیوک سنگھ کی پانچ روزہ آل انڈیا ایگزیکٹو میٹنگ اندور میں شروع ہوگئی ہے۔ 12 جنوری کو ، بی جے پی کے قومی صدر اور وزیر داخلہ امیت شاہ جبل پور میں این آر سی اور سی اے اے کے حوالے سے منعقدہ پروگرام میں شرکت کریں گے۔ ریاستی کوآپریٹو وزیر گووند سنگھ نے دونوں پروگراموں پرتنقید کرتے ہوئے بی جے پی پر زبردست حملہ بولاہے۔ذرائع کے مطابق گووند سنگھ کا کہنا ہے کہ بی جے پی کے پاس نہ تو نوجوانوں کو روزگار دینے کاکوئی پلان ہے اورنہ ملک کی ترقی پرلیجانے کی کوئی حکمت عملی۔ دنیا میں ہندوستان کا امیج خراب ہورہا ہے ، ملک کی معاشی صورتحال کمزور ہوتی جارہی ہے۔ عوام پریشان ہے۔ لیکن بی جے پی کے پاس صرف ایک ہی کامہے ، کبھی گﺅماتاکے نام پر اور کبھی رام مندر کے نام پر ، وہ اپنی سیاست چمکانے کے لئے عوام کوبیوقوف بناتی ہے۔گووند سنگھ کامزید کہنا ہے کہ مذہبی جذبات کو بھڑکا کر بی جے پی ملک کی سیاست برقرار رکھنا چاہتی ہے۔ بی جے پی کی کوشش ہے کہ ملک میں اتحاد نہیں ہونا چاہئے اور ان کی سیاست چلتے رہناچاہئے۔ کیونکہ بی جے پی اگر سب کو ساتھ لے کر چلے گی ،تو ان کی سیاست خطرے میں پڑ جائے گی۔ لہذا ، بی جے پی ہندو اور مسلم کے درمیان تفریق پیداکر اقتدار پرقابض رہناچاہتی ہے۔