لاک ڈاؤن میں انٹرنیٹ کا استعمال دو گنا سے بھی زیادہ

نئی دہلی، 14 نومبر: کورونا وبا کی روک تھام کے لیے نافذ لاک ڈاون میں جب مواصلات کے تقریباً تمام ذرائع بند ہو گئے تو ڈیجیٹل کنیکٹیویٹی ایک اہم ٹول کے طور پر ابھری اور یہی وجہ ہے کہ دو سالوں میں انٹرنیٹ کا استعمال دوگنا سے بھی زیادہ ہو گیا ہے۔
ایشیا بحرالکاہل میں ڈیجیٹل پالیسی کے مسائل پر کام کرنے والے علاقائی تھنک ٹینک ایل آئی آر این ای اےشیااور نئی دہلی میں قائم پالیسی پر مبنی اقتصادی پالیسی کے تھنک ٹینک آئی سی آر آئی ای آر کی طرف سے جاری مشترکہ سروے رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ لاک ڈاون میں ڈیجیٹل کنیکٹیویٹی دوگنی سے زیادہ ہو گئی ہے۔
15 سے 65 سال کی عمر کے 49 فیصد لوگوں نے انٹرنیٹ استعمال کرنے کی اطلاع دی، جب کہ 2017 کے آخر میں 15-65 سال کی عمر کے گروپ میں سے صرف 19 فیصد نے انٹرنیٹ استعمال کیا۔