544 پٹواریوں کا کیا گیا انکے منتخب اضلاع میںٹرانسفر، 650 اب بھی قطار میں


بھوپال12نومبر(نیا نظریہ بیورو)حکومت نے مدھیہ پردیش کے پٹواریوں کے انضمام کا راستہ کھول دیا ہے۔ جس کی وجہ سے ان کے تبادلے ان اضلاع میں کیے جا رہے ہیں جہاں وہ جانا چاہتے ہیں۔ لینڈ ریکارڈ ڈیپارٹمنٹ نے ایسے 544 پٹواریوں کو ان کے منتخب اضلاع میں منتقل کر دیا ہے۔ اب بھی 650 کے قریب پٹواری قطار میں کھڑے ہیں۔ اگر متعلقہ ضلع میں آسامیاں خالی ہیں تو ان کا تبادلہ بھی کر دیا جائے گا۔
مدھیہ پردیش پٹواری یونین نے انضمام کا مطالبہ کیا تھا۔ آخر حکومت نے انضمام کے تحت منتقلی شروع کر دی ہے۔ پٹواری یونین کے صوبائی صدر اوپیندر سنگھ بگھیل نے کہا کہ مدھیہ پردیش میں تقریباً 6 ہزار پٹواری ہیں جو اپنے آبائی ضلع یا اپنے منتخب ضلع میں منتقلی کے خواہاں ہیں۔ ان میں سے 1100 نے درخواستیں دی تھیں اور محکمہ نے 544 پٹواریوں کو اہل قرار دیتے ہوئے ان کا تبادلہ کر دیا ہے۔ باقی آسامیاں بھی خالی ہونے کے بعد ٹرانسفر کر دی جائیں گی۔
صوبائی صدر بگھیل نے کہا کہ جن اضلاع میں عہدہ خالی ہے وہاں انضمام کیا گیا ہے۔ مثلاً میاں بیوی دونوں سرکاری ملازمت میں ہوں، یا کوئی شدید بیماری ہو وغیرہ۔ انضمام کے حوالے سے پٹواری سنگھ عرصہ دراز سے مطالبہ کر رہے تھے۔ باقی ماندہ پٹواریوں کو ان کی پوسٹ خالی ہونے پر ٹرانسفر کر دیا جائے گا۔
یہاں ویب جی آئی ایس سافٹ ویئر نے پٹواریوں کی پریشانی میں اضافہ کر دیا ہے۔ جمعہ کو بھی سرور بند رہا۔ جس کی وجہ سے پٹواری کام نہ کر سکے۔ تاہم محکمہ نے لینڈ ریکارڈ پیوریفیکیشن فورنائٹ کی تاریخ میں توسیع کردی ہے۔ اس سے انہیں کام میں کچھ راحت ملے گی۔