لاک ڈاون میں غریب خاندان فاقہ کشی کاشکار


بھوپال/سیدھی:8اپریل(نیانظریہ بیورو)
مدھیہ پردیش میں لاک ڈاو¿ن مسلسل جاری ہے۔وہیں ریاست کے سیدھی ضلع میں کورونا وائرس کی وجہ سے لاک ڈاو¿ن میں ہر شہری پریشان ہے ، جبکہ یہ لاک ڈاو¿ن غریب مزدور طبقے کے لئے بہت بڑا مسئلہ بن گیا ہے۔ جس کی وجہ سے ، اب ان کے سامنے بھوک سے مرنے کی نوبت آگئی ہے۔ غریبوں کی ابتدائی امداد کے لئے ضروراشیاءکی فراہمی کے لئے انتظامیہ کے پاس بھی پہنچنے کاکوئی ذریعہ نہیں ہے۔اورنہ ہی ان کی اس بدحالی خبرکوئی انتظامیہ تک پہنچارہاہے۔جس کی وجہ سے پورا گاو¿ں بھوک کی شدت سے بے حال تو ہے ہی لیکن شدید مایوسی میں بھی ضرورت مندمبتلاہیں۔
بتایاجاتاہے کہ سیدھی میں کورونا وائرس کی جنگ لڑنے والے شہری باشندے اب پریشان ہیں ، خاص کر روز مرہ کمانے والوں کے لئے تویہ وقت ان کے لئے پہاڑ توڑنے جیساہے،جس کی وجہ سے وہ لوگ سخت پریشانی کا سامنا کرر ہے ہیں۔ بی ٹی آئی کالج کے سامنے پسماندہ طبقے والے افراد موجود ہیں جو رکشہ چلاتے ہیں اور اگر کوئی کنبہ کہیں کام بھی کررہاہے تو اس وقت انہیں کوئی تنخواہ نہیں مل پارہی ہے،جس کی وجہ سے وہ لوگ دووقت کی روٹی کے محتاج ہیں۔ لیکن گذشتہ پندرہ دن سے پوری ریاست میں لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے غریب مزدوراپنے گھروں میں بیٹھنے پر مجبور ہوگئے ہیں۔اس دوران ان کے پاس نہ توکوئی کھانے کی اشیاءہے اورنہ ہی کوئی دوسراذریعہ۔وہ صرف اس وقت لوگوں سے مدد کی امیدپرجی رہے ہیں۔