ریاست میں 14 اپریل کے بعد بھی جاری رکھاجاسکتاہے لاک ڈاو¿ن


بھوپال:7اپریل(نیانظریہ بیورو) ریاست بھر میں کورونا کے بڑھتے ہوئے معاملات کے پیش نظر یہ قیاس کیا جارہا ہے کہ لاک ڈاو¿ن میں مزید کچھ دن اور اضافہ ہوسکتا ہے ، جس کا اشارہ وزیر اعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان نے بھی دیا ہے۔ اگرچہ انہوں نے براہ راست یہ نہیں کہا کہ لاک ڈاو¿ن میں اضافہ ہوگا لیکن انہوں نے کہا کہ لوگوں کی زندگیاں زیادہ اہم ہیں۔ اگر معاملات قابو میں نہیں آتے ہیں تو صورتحال کو دیکھنے کے بعد لاک ڈاو¿ن میں اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا جائے گا۔
لوگوں کی زندگی زیادہ اہم :
وزیر اعلی نے کہا کہ عوامی زندگی زیادہ اہم ہے اور اس کے لئے لاک ڈاو¿ن برداشت کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہم بعد میں معیشت کی تعمیر کریں گے لیکن اگر لوگوں کی زندگیاں ضائع ہوجائیں گی تو واپس کہاں سے لائیں گے۔اس لئے فی الحال توکورونا پرقابوپاناہماری ترجیح ہے۔ریاست کوہم اس وباسے دورکرناچاہتے ہیں۔اسے کیسے حاصل کیا جائے اس پرغورکیاجارہاہے۔ وزیر اعلی نے کہا کہ بھوپال اور اندور کی صورتحال میں بہت محتاط رہنے کی ضرورت ہے۔ لہذا اگر ضرورت پیش آئے تو ، ہم لاک ڈاو¿ن کو اور بھی بڑھا دیں گے ، کیونکہ ہمارے لئے لوگوں کی زندگی سب سے اہم ہے۔ذرائع کاکہنا ہے کہ 7 ریاستوں کی حکومتوں نے لاک ڈاو¿ن بڑھانے کے اشارے دیئے ہیں۔وہیںملک گیر لاک ڈاو¿ن کے 14 دن مکمل ہونے کے بعد ، اب یہ سوال بڑھتا جارہا ہے کہ کیا یہ لاک ڈاو¿ن 14 اپریل کے بعد بھی آگے بڑھے گا؟ غورطلب ہے کہ اب تک ،تقریبا 7 ریاستوں کی حکومتوں کی طرف سے 14 اپریل کے بعد بھی لاک ڈاو¿ن بڑھانے کے اشارے ملے ہیں۔