لال بہادرشاستری سے متاثر ہوکر سابق وزیر نے ایک وقت کھانا کھانے کاکیاعزم


بھوپال:7اپریل(نیانظریہ بیورو) سابق وزیر رابطہ عامہ اور کانگریس ایم ایل اے پی سی شرما نے سابق وزیر اعظم لال بہادر شاستری سے ترغیب لیکر کورونا بحران کے وقت دن میں صرف ایک مرتبہ کھاناکھانے کا عہد کیا ہے۔ اس عزم میںان کا خاندان بھی ان کے ساتھ ہے۔ اس طرح وزیر شرما اور اس کا پورا کنبہ لاک ڈاو¿ن کے دوران ایک مرتبہ ہی کھاناکھائیں گے اور جو کھانا باقی رہ جائے گا اس سے غریب اور لاچار لوگوں کی مدد ہوگی۔ وزیر موصوف نے عام لوگوں سے اپیل کی ہے کہ وہ اس طرح عزم کریں اور لاک ڈاو¿ن میں پھنسے غریب اور لاچار لوگوں کے لئے کھانے اور راشن کا انتظام کریں۔
لال بہادر شاستری سے متاثر ہوکر وزیر پی سی شرما نے کہا کہ ملک کے سابق وزیر اعظم لال بہادر شاستری نے 1965 میں ہندپاک جنگ کے دوران تمام لوگوں سے ایک دن کے روزہ رکھنے کا عہدلیا تھا ، ان سے متاثر ہوکر آج کورونا بحران کے وقت میںاور میرے اہل خانہ نے عہد لیا ہے کہ لاک ڈاو¿ن میں ہم صرف ایک وقت کھائیں گے اور باقی کھانا غریب اور لاچار لوگوں کو مہیا کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا ہے کہ ہم پہلے بھی یہ کام کر رہے تھے اور لوگوں کو راشن آٹا ، گندم ، چاول مہیا کررہے تھے ، لیکن اب میں یہ کام کسی محدود علاقے کے اعلان کی وجہ سے نہیں کر رہا ہوں۔ تاہم ، ہم نے ملازمین بھون میں ایک باورچی خانہ شروع کیا ہے ، جس میں غریب عوام کے لئے روزانہ کھانے کے لئے ڈھائی سے تین ہزار پیکٹ تیار کیے جارہے ہیں۔
سابق وزیر پی سی شرما نے تمام کانگریسیوں اور عام شہریوں سے درخواست کی ہے کہ وہ لال بہادر شاستری کی سے ترغیب لیکر عہد لیں اور کورونا بحران کے وقت ایک ہی وقت کھانا کھائیں۔ اپنے آس پاس کے غریب لوگوں کو بچا ہوا کھانا مہیا کرائیں۔ مجھے یقین ہے کہ بھوپال میں 5-6 لاکھ غریب لوگ ہوں گے ، جو روزانہ کماتے اور کھاتے تھے۔ اگر ایسے خاندان کے سامنے یہ بحران پیدا ہوا ہے تو ان کے لئے کھانا تقسیم کریں۔ لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے ، ان لوگوں کو کھانا فراہم کریں جو راشن تک رسائی سے قاصر ہیں۔ یہ لاک ڈاو¿ن میں غریبوں کی مدد کرے گا۔