پرانی عمارتیں بھی اندور کارپوریشن کے نئے قوانین کی زد میں :

کمرشل استعمال میںہونے والی عمارت کو دیے جا رہے نوٹس، کمشنر نے تشکیل دی ٹیم
اندور04نومبر(نیا نظریہ بیورو)پرانی عمارتیں بھی میونسپل کارپوریشن کے نئے قوانین کی زد میں آ رہی ہیں۔ کارپوریشن کی تشکیل کردہ ٹیم نے سب کو نوٹس دینا شروع کر دیا ہے۔ میونسپل کارپوریشن کے پہلے قوانین میں صرف 10 فیصد حصہ ہی قانونی کیا جاتاتھا جسے اب بڑھا کر 30 فیصد کردیا گیا ہے۔ کمشنر نے اس معاملے میں ایک ٹیم بنا کر جائیدادوں کی مناسب جانچ شروع کر دی ہے۔
میونسپل کمشنر پرتبھا پال نے ایک ٹیم بنا کر بلڈنگ پرمیشن آفیسر سندیپ سونی کو ذمہ داری دی ہے۔ اس کے لیے انہوں نے تجارتی استعمال میں آنے والی شہر کی کئی عمارتوں کولیا ہے۔ ٹیم کا بنیادی مقصد اثاثوں کو قانونی شکل دینے کے ساتھ ساتھ زیادہ ریونیو اکٹھا کرنا ہے۔
گزشتہ ایک ماہ سے جاری مہم میں اب تک تقریباً درخواستیں میونسپل کارپوریشن کے پاس جائیداد کو قانونی حیثیت دینے کے لیے پہنچ چکی ہیں۔ تقریباً 12 کروڑ کی آمدنی بھی ہوئی ہے۔ اس کے لیے کمشنر پال نے اسے چار ماہ کے لیے 28 فروری تک بڑھا دیا ہے، تاکہ زیادہ سے زیادہ لوگ اس میں شامل ہو کر فائدہ اٹھا سکیں۔
کارپوریشن کی ٹیم اب پرانی تعمیرات میں تبدیلیوں کے حوالے سے نئے سرے سے پیمائش کر رہی ہے۔ کارپوریشن کی ٹیم نے دو مالوں کی پیمائش کی تھی۔ اسے کچھ حصہ توڑ کر بنایا گیا تھا۔ اس سے قبل میونسپل عہدیداروں کی طرف سے اس کی اجازت نہ ہونے کے ساتھ ریونیو نہ دےنے کی بات کہی گئی تھی۔ اب اہلکار اس میں کمپاو ¿نڈنگ کے تحت معلومات دینے کی بات کر رہے ہیں۔ اس طرح دیوالی کے بعد شہر کے دیگر کاروباری مقامات پر بھی کارروائی کی جاسکتی ہے۔