مرکز کے بعد مدھیہ پردیش حکومت نے بھی پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کمی کا فیصلہ کیا

بھوپال، 04 نومبر: مرکزی حکومت کی جانب سے ایکسائز ڈیوٹی میں کمی کرکے پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کمی کے بعد مدھیہ پردیش کی بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) حکومت نے آج ان کی قیمتوں میں مزید راحت دینے کے مقصد سے ویلیو ایڈڈ ٹیکس (وی اے ٹی) کم کرنے کا اہم فیصلہ کیا۔
وزیراعلی شیوراج سنگھ چوہان نے یہاں معمول کے شجرکاری کے بعد میڈیا سے بات چیت میں یہ جانکاری دی۔ انہوں نے بتایا کہ مرکزی حکومت نے ایکسائز ڈیوٹی کو کم کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کے بعد ریاستی حکومت نے بھی ویٹ کو کم کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کا اطلاق آج سے ہی ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ اس حوالے سے تفصیلات جلد جاری کی جائیں گی۔
ملک میں حالیہ ضمنی انتخابات کے نتائج کے بعد مرکزی حکومت نے دیوالی سے ایک دن قبل کل ایکسائز ڈیوٹی میں کمی کرکے پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں راحت فراہم کی ہے۔ مرکز نے پٹرول اور ڈیزل پر ایکسائز ڈیوٹی میں بالترتیب 5 روپے اور 10 روپے کی کٹوتی کی ہے۔ اس کے بعد اتر پردیش اور ہماچل پردیش سمیت کچھ ریاستوں نے بھی پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں راحت کے مقصد سے فیصلے کیے ہیں۔
مدھیہ پردیش میں مرکز اور ریاست کے ریلیف کے اعلان سے پہلے ہی پٹرول اور ڈیزل ایک سو روپے سے لے کر 120 روپے فی لیٹر کے درمیان فروخت ہو رہا تھا۔
مسٹر چوہان نے کہا کہ وزیر اعظم نریندر مودی نے پٹرولیم مصنوعات پر ایکسائز ڈیوٹی کو کم کرنے کا ایک تاریخی فیصلہ کیا ہے۔