اندور میں 128 افراد کورونا پازیٹیو


اب تک 9افراد بنے لقمہ اجل
اندور 05 اپریل(نیا نظریہ بیورو) اتوار کو دوپہر ایک اور کورونا مثبت خاتون کی موت ہوگئی۔ خاتون ایم آر ٹی بی اسپتال میں زیر علاج تھی۔ سنیہ لتاگنج ساکن ایک 53 سالہ خاتون کو 10 روز قبل سردی ، کھانسی اور سانس لینے میں دشواری ہوئی تھی۔ اسے تین دن تک تیز بخار بھی تھا۔ خاتون کا کسی بھی طرح کا سفر اور رابطے کی تاریخ نہیں ہے۔ اس سے قبل ہفتہ کے روز ہاتھی پالا علاقہ ساکن 42 سالہ ایک شخص نے دم توڑ دیا تھا ۔ اسی طرح چندن نگرساکن 80 سالہ معمر خاتون کی تین روز قبل موت ہوگئی تھی ، لیکن افسران کے ذریعہ یہ معلومات پوشیدہ رکھی گئی ۔ کھجرانہ کے 54 سالہ مریضہ کی بھی جمعہ کی رات موت ہوگئی ، ہفتہ کو ان کی رپورٹ آئی۔ اب تک ، ا ندور میں 128 افرادکورونا مثبت ہیں ، جن میں سے 9 مریض اپنی زندگی سے ہاتھ دھو بیٹھے ۔ اب تک ریاست میں اموات کی تعداد 13 ہوچکی ہے۔

9 مریضوں کی رپورٹ آئی منفی
ڈویژنل کمشنر جناب آکاش ترپاٹھی نے کہا ہے کہ اتوار کے روز 9 مثبت مریضوں کی رپورٹ منفی آئی ہے۔ ان 9 مریضوں میں سے 8 اروندو اسپتال میں اور ایک ایم آر ٹی بی اسپتال میں بھرتی ہیں۔ ڈویژنل کمشنر نے کہا ہے کہ پہلی رپورٹ منفی آنے کے بعد اب پروٹوکال کے تحت ان کا نمونہ دوسری بارجانچ کیلئے بھیجا جا ئے گا ۔ اگر یہ نمونہ بھی منفی آتا ہے تو پھر یہ تمام 9 مریض اسپتال سے فارغ کر دئے جائیں گے۔
صوبہ کی بات کی جائے تو اب تک 186افراد کورونا سے متاثر ہوئے ہیں۔ ان میں سے اندور میں 128 ، مورینا 12 ، بھوپال 18 ، جبل پور 8 ، اُجین 7 ، کھرگون 4 ، بڑوانی 3 ، گوالیار ، شیوپوری اور چھندواڑہ میں 2 افراد متاثر ہوئے ہیں۔ اندور میں9 ، اُجین میں 2 ، کھرگون اور چھندواڑہ میں ایک ایک کی موت ہو چکی ہے۔ اس میں بھوپال کے 2 اورشیوپوری کے ایک مریض کو صحت یابی کے بعد انہیں گھر بھیجا جا چکا ہے۔