تری پورہ فساد:ہندستان کی شناخت کثرت میں وحدت کے تصور کو نقصان۔ مولانا اعجاز عرفی قاسمی

نئی دہلی، 26اکتوبر: سرحدی ریاست تری پورہ میں رونما ہونے والے فرقہ وارانہ فسادات کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے آل انڈیا تنظیم علماء حق کے قومی صدرمولانا محمد اعجاز عرفی قاسمی نے کہا کہ دائیں بازو کے شر پسند عناصر نے مسلم اقلیتوں، ان کے گھروں، ان کی دکانوں اور مسجدوں پر حملہ کرکے ہندستان کی شناخت کثرت میں وحدت کے تصور کو نقصان پہنچایا ہے۔

انہوں نے آج یہاں جاری ایک بیان میں دعوی کیا کہ تقریبا ایک ہفتہ سے شر پسند عناصر مسلم اقلیتوں کی جان و مال، جائداد اور ان کی عبادت گاہوں کو نشانہ بنارہے ہیں، ان کے گھروں کو نذر آتش کیا جارہا ہے، ان کے خلاف گلیوں میں اور سڑکوں پر دل آزار نعرے لگائے جا رہے ہیں اورحکومت کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگ رہی ہے۔
انھوں نے موجودہ سرکار کی مجرمانہ خاموشی اور ناکامی پر حیرت کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایک جمہوری ملک میں مذہبی اور لسانی اقلیتوں کو جانی اور مالی تحفظ عطا کرنا، نیز ان کی عبادت گاہوں، گھروں، ان کی دکانوں اور ان کے تعلیمی اداروں کی حفاظت کرنا اور انھیں فرقہ پرست عناصر کی ریشہ دوانیوں سے بچانا بر سر اقتدار حکومت کی آئین و دستور کی صراحت کے مطابق حفاظت ضروری ہے، جس میں بی جے پی سرکارہمیشہ سے ناکام رہی ہے۔