پوروانچل اب ملک کو ڈاکٹر دینے والے علاقے کے طورپرجاناجائے گا:مودی

سدھارتھ نگر 25 اکتوبر: وزیر اعظم نریندر مودی نے پیر کو اتر پردیش کے سدھارتھ نگر میں ایک ضلع ایک میڈیکل کالج اسکیم کے تحت نئے میڈیکل کالج کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ صحت کی ناقص سہولیات کے لئے بدنام ہوچکا ریاست کا پوروانچل علاقہ اب ملک کو ڈاکٹر فراہم کرنے والے علاقے کے طورپرجانا جائے گا مسٹر مودی نے اتر پردیش کی گورنر آنندی بین پٹیل ، وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ اور مرکزی وزیر صحت منسکھ مانڈویہ کی موجودگی میں سدھارتھ نگر سمیت نو اضلاع میں ایک ایک نئے میڈیکل کالج کا ریموٹ کنٹرول سے افتتاح کیا۔
اس موقع پر منعقدہ جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ آج کا دن پورانچل سمیت پورے اتر پردیش کے لیے “آروگیہ کی ڈبل ڈوز” لے کر آیا ہے۔ انہوں نےعوام سے کہا کہ یہ موقع آپ کے لیے ایک تحفہ لے کر آیا ہے۔ کیونکہ پوروانچل سے ہی پورے ملک میں طبی سہولیات کا بنیادی ڈھانچہ قائم کرنے کا منصوبہ شروع ہونے جارہا ہے۔ مسٹر مودی نے کہا، ’’میں یہاں کی مٹی کی برکت لے کروارانسی میں اس اسکیم کا آغاز کروں گا۔
قابل ذکر ہے کہ وزیر اعظم مودی اتر پردیش کے اپنے ایک روزہ دورے کے دوران سدھارتھ نگر کے بعد وارانسی میں 64 ہزار کروڑ روپے کی لاگت والی تاریخی ‘پردھان منتری آتم نر بھر سوستھ بھارت یوجنا’ کا بھی آغاز کریں گے۔ اس سے قبل انہوں نے سدھارتھ نگر میں 2329 کروڑ روپے کی لاگت سے سدھارتھ نگر، ایٹہ ، ہردوئی ، پرتاپ گڑھ ، دیوریا ، غازی پور ، مرزا پور ، فتح پور اور جون پور اضلاع میں نوتعمیر شدہ میڈیکل کالجوں کا افتتاح کیا۔
ان کالجوں کے افتتاح کے بعد مسٹر مودی نے جلسہ عام میں یوگی حکومت کے کام کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ جو حکومت آج مرکز اور اتر پردیش میں کام کر رہی ہے وہ دہائیوں سے ’کرم یوگیوں کی تپسیا ‘ کانتیجہ ہے۔ انہوں نے سدھارتھ نگر کے آنجہانی لیڈر مادھو پرساد مشرا کے نام پر مقامی میڈیکل کالج کا نام رکھنے پر یوگی حکومت کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ مادھو بابو نے سیاست میں کرم یوگ کے قیام کے لئے اپنی پوری زندگی صرف کردی تھی۔ انہوں نے کہا کہ مادھو بابو نے ریاستی بی جے پی صدر اور مرکزی وزیر کی حیثیت سے سماج کو سیاست میں کرم یوگ کا سبق پڑھایا۔ مسٹر مودی نے کہا ، “سدھارتھ نگر میڈیکل کالج کا نام انہیں مادھو پرساد مشرا کے نام پر رکھا گیا۔ میں اس کے لیے یوگی حکومت کو مبارکباد دیتا ہوں۔