کورونا سے دو لوگ ہوئے ہلاک ، پازیٹیو مریضوں کی تعداد ہوئی 115 ، ضلع انتظامیہ نے گیارہ علاقوں کو کیا سیل


اندور 04 اپریل (نیا نظریہ بیورو)مدھیہ پردیش میں کورونا سے متاثرہ مریضوں کی تعداد 165 ہوگئی ہے۔ اس وبا سے اب تک 11 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ ہفتہ کو ریاست میں دومریضوں کی موت ہوگئی۔ ان میں سے ایک کی عمر 80 سال ہے ، جبکہ دوسرا مریض 42 سال کا ہے۔ دونوں کا علاج ایم وائی اسپتال میں کیا جارہا تھا۔ کورونا سے شہر میں ہلاکتوں کی تعداد 7 ہو گئی ہے۔ فی الحال چھند واڑہ کے ایک اور اندور کے ایک مریض کی کو رونا کے سبب جان گئی ہے۔ بھوپال میں ایک لڑکی کی رپورٹ پازیٹیو آئی ہے لیکن اس کے والد کی رپورٹ منفی آئی ہے۔ جمعہ کے روز اندور میں انفیکشن کے 23 نئے کیس سامنے آئے تھے۔ ہفتہ کے روز اندور میں مثبت مریضوں کی تعداد 115 ہوگئی۔ جو بھی نئے مریض سامنے آئے ہیں ، وہ پہلے ہی کوارنٹائن ہیں ۔ انہیں یہ انفیکشن اپنے اہل خانہ یا رشتہ داروں کے توسط سے ہوا۔ صوبہ میں 165 مریض کورونا سے متاثر ہیں۔ ان میں سے اندور میں 115 ، مورینا میں 12 ، بھوپال میں 15 ، جبل پور 9 ، اُجین میں 7 ، گوالیار ، شیوپوری اور چھندواڑہ میں 2-2 اور کھرگون میں ایک مریض کی موت ہو گئی ہے ۔
کورونا سے ہوئی اموات پر ایک نظر
مدھیہ پردیش میں مرنے والوں کی تعداد 11 ہو گئی ہے ۔ 24 مارچ کواُجین ساکن 65 سالہ خاتون کی پہلی موت ہوئی ۔ 25 مارچ کواندو کے رانی پورہ ساکن 65 سالہ معمر شخص کی ہوئی موت ۔ 27 مارچ کو اُجین میں 34 سالہ بیٹری مرمت کا کام کرنے والے شخص کی مو ت ۔ موت کے دو دن بعد ان کی رپورٹ مثبت آئی۔ 29 مارچ کو کھر گون سے تعلق رکھنے والے 62 سالہ شخص کی موت۔ ان کی رپورٹ کی موت کے دو دن بعد آئی۔ 30 مارچ کو اندور کے چندن نگر کی 49 سالہ معمر خاتون کا انتقال ہوگیا۔ 30 مارچ کوایم آر 09میںراجکمار کالونی کے 41 سالہ نوجوان کی موت۔ 02 اپریل کو اندور کے موتی طویلہ ساکن54 سالہ ایک شخص کا ایم وائی اسپتال میں انتقال ہوگیا ۔اسی طرح 02 اپریل کو اندور کھجرانہ ساکن 65 سالہ خاتون نے دم توڑ دیا۔ 04 اپریل کو اندور کے ایم وائی اسپتال میں داخل 80 سالہ خاتون کی موت ہوگئی۔ 04 اپریل کو ہی اندور کے ایم وائی اسپتال میں داخل 42 سالہ شخص نے دم توڑ گیا۔ اسی طرح 04 اپریل کو ہی چھندواڑہ ڈسٹرکٹ اسپتال میں داخل 33 سالہ نوجوان کی موت ہو گئی۔