دہلی میں کورونا وائرس سے شفایابی کی شرح تقریباً 88 فیصد، ممنوعہ زون کی تعداد 714

نئی دہلی: قومی دارالحکومت دہلی میں کورونا وائرس (کووڈ-19) کے انفیکشن سے نجات پانے والے متاثرین کی تعداد میں مسلسل اضافے اور نئے مریضوں کی تعداد کم ہونے کی وجہ سے اتوار کے روز کورونا وائرس سے شفایابی کی شرح 87.95 فیصد ہوگئی۔ وزارت صحت دہلی کی طرف سے آج جاری ہونے والی ایک بلیٹن کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 1075 نئے معاملوں کی تصدیق کے بعد متاثرہ افراد کی تعداد 130606 ہوگئی۔
دہلی کے لئے راحت کی بات یہ ہے کہ صحت یاب ہونے والے افراد کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ اس عرصے کے دوران 1807 مریضوں کی شفایابی کے ساتھ مجموعی طور پر 114875 افراد صحتیاب ہوچکے ہیں اور شفایابی کی شرح 87.95 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔ دریں اثناء، مزید 21 مریضوں کی موت ہونے سے اموات کی کل تعداد 3827 ہوگئی ہے۔
قومی دارالحکومت میں زیر علاج مریضوں کی تعداد بھی کل کے 12657 سے کم ہو کر 11904 ہوگئی۔ ان میں سے 6974 گھر پر قرنطینہ میں اور 2856 اسپتالوں میں ڈاکٹروں کی نگرانی میں ہیں۔ باقی افراد کا علاج دوسرے کووڈ مراکز میں جاری ہے۔
گزشتہ چند دنوں میں کورونا ٹیسٹ میں تیزی آنے کے ساتھ جانچ کل تعداد 946777 تک پہنچ گئی ہے۔ دہلی میں گزشتہ 24 گھنٹے میں 17 ہزار سے زیادہ نمونوں کی جانچ کی گئی۔ دہلی میں 10 لاکھ کی آبادی پر اوسطاً 49830 ٹیسٹ ہوئے ہیں۔ دہلی کے اسپتالوں میں کورونا مریضوں کے لیے بستروں کی کل تعداد 15475 ہے جن میں سے 2856 بھری ہوئی ہیں اور 12619 خالی ہیں۔ دہلی مختلف اضلاع میں ممنوعہ علاقوں کی تعداد 714 ہے۔