راجیو گاندھی فاونڈیشن میںفنڈنگ معاملہ: انٹرمنسٹریل کمیٹی سے تحقیقات مرکزی حکومت کا صحیح قدم ہے :کمل پٹیل


بھوپال:8جولائی (نیانظریہ بیورو)
راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن میں فنڈ نگ کی تحقیقات کے لئے مرکزی حکومت نے ایک کمیٹی تشکیل دی ہے۔ شیوراج حکومت میں وزیر زراعت کمل پٹیل نے مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کو حال ہی میں اس معاملے کی سی بی آئی جانچ کرانے کو لےکر خط لکھا تھا۔ مرکزی حکومت کے ذریعہ جانچ کمیٹی تشکیل دینے پر وزیر زراعت کمل پٹیل نے مرکزی حکومت کا شکریہ ادا کیاہے۔ انہوں نے کہا کہ جانچ سے سابق وزیر اعلی کمل ناتھ کی بدعنوانیاں سامنے آئیں گی۔دراصل وزیر زراعت کمل پٹیل نے 30 جون کو مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ کو خط لکھ کر راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن میں فنڈنگ کی جانچ کا مطالبہ کیا تھا۔ جس میںاس وقت کی یوپی اے حکومت سے چین کے تعلقات کا ذکر کرتے ہوئے چینی سفارت خانے سے راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن کو کروڑوں روپے فنڈنگ کا حوالہ دیا تھا۔وزیر کمل پٹیل نے معاملے میں ریاست کے سابق وزیراعلیٰ کمل ناتھ کے کردارکی بھی جانچ کرنے کا مطالبہ کیاتھا۔ جو اس وقت مرکز کی یو پی اے حکومت میں وزیر تجارت تھے۔ کمل پٹیل نے وزارت داخلہ کے ذریعہ قائم کردہ جانچ کمیٹی کا خیرمقدم کرتے ہوئے کہا کہ اس میں شامل رہنماﺅں کے کردار کی بھی جانچ ہونی چاہئے۔ راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن کی فنڈنگ کو لےکر اٹھ رہے سوالات کے درمیان مرکزی حکومت نے ایک بڑا فیصلہ لیا ہے۔ وزارت داخلہ نے راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن ، راجیو گاندھی چیریٹبل ٹرسٹ ، اندرا گاندھی میموریل ٹرسٹ میں مالی بے ضابطگیوں کی تحقیقات کے لئے انٹر منسٹریل گروپ تشکیل دیا ہے۔ یہ گروپ پی ایم ایل اے ، ایف سی آر اے اور انکم ٹیکس کی خلاف ورزیوں کی تحقیقات کرے گا۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کے خصوصی ڈائریکٹر اس انٹر منسٹریل کمیٹی کے سربراہ ہوں گے۔ راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن پر بی جے پی کا کہنا ہے کہ اگر یہ مان بھی لیا جائے کہ راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن ایک تعلیمی ، ثقافتی اور سماجی تنظیم ہے ،پھر بھی حکومت کویہ بتانا ہوتا ہے کہ آپ نے چین کے سفارت خانے سے پیسہ کیوں لیا؟ اگر لیا تو اس کو کہاں لے گئے؟ راجیو گاندھی فاو¿نڈیشن نے نہ صرف پیسہ لیا بلکہ قانون کی بھی خلاف ورزی کی۔ اگر کوئی اس قانون کی خلاف ورزی کرتا ہے تو پھر اسے 5 سال تک کی سزا ہوسکتی ہے ،ایسے میں ملک اس کا جواب چاہتا ہے۔