کورونا انفیکشن: ’سپلا‘ کمپنی نے سنائی خوشخبری، جینرک دوا ’سیپرمی‘ لانچ

ممبئی: ہندوستان میں کورونا انفیکشن کے بڑھتے معاملوں کے درمیان دوا ساز کمپنی سپلا نے کورونا وائرس کے علاج کے لئے ‘سیپرمی’ نامی ایک جینریک دوا لانچ کی ہے۔ ہندوستانی کمپنی سپلا کے ذریعہ لانچ کردہ اس دوا سے خوش آئند نتائج برآمد ہونے کے امکانات ہیں اور یہ لوگوں کے لیے ایک بڑی خوشخبری بھی ہے۔
دوا ساز کمپنی سپلا نے آج بتایا کہ یو ایس فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن (یو ایس ایف ڈی اے) نے حال ہی میں ہنگامی استعمال آتھرائزیشن (ای یو اے) جاری کرتے ہوئے گلیڈ سائنسز کو اسپتال میں داخل کووڈ-19 کے مریضوں کے علاج معالجے کے لئے ریمیڈیسیور کو استعمال کرنے کی اجازت دی ہے۔ سپلا کی طرف سے جاری کی جانے والی دوا ‘سیپرمی’ اسی ریمیڈیسیور دوا کا جینرک ورژن ہے۔ گلیڈسائنسز نے سیپلا کو جینرک دوا تیار کرنے اور اس کی مارکیٹنگ کا لائسنس دیا ہے۔
کنٹرولر جنرل آف ڈرگس آف انڈیا (ڈی سی جی آئی) نے بھی سیپرمی کے استعمال کی منظوری دے دی ہے۔ سپلا نے کہا کہ وہ ڈیزاسٹر مینجمنٹ پلان کے تحت سیپرمی دواؤں کے استعمال کی تربیت دے گی۔ جو مریض اس دوا کو استعمال کریں گے ان کو رضامندی کا ایک فارم پُر کرنا ہوگا۔ اس دوا کی سپلائی حکومت کے ذریعہ ہوگی اور یہ دوا دوکانوں سے بھی خریدی جاسکے گی۔ واضح رہے کہ اس سے قبل دوا ساز کمپنی ہیٹیرا نے بھی کوویفور کے برانڈ نام سے ریمیڈیسیور کا جینرک ورژن لانچ کیا تھا۔