پازیٹیو مریضوں کی تعداد ہوئی89 ،اب تک چھ افراد جاں بحق


اندور 03 اپریل (نیا نظریہ بیورو) شہر میں اب تک 89 مریضوں میں کوروناوائرس کی تصدیق ہو چکی ہے جن کا علاج کورونا کیلئے منتخب اسپتالوں میں کیا جا رہا ہے۔ ان سب کے درمیان ایک بہترین خبر یہ ہے کہ کورونامثبت آئے 17 مریض کی حالت ابھی ٹھیک ہے اور وہ اس بیماری سے تقریباً ٹھیک ہو چکے ہیں۔ کمشنر جناب آ کاش ترپاٹھی نے جمعہ کو بتایا کہ کورونا کے شکار 17 مریض اب اس بیماری سے تقریباً ٹھیک ہو چکے ہیں۔ ان میں شامل 4 مر یضوں کی جانچ رپورٹ کورونامنفی آئی ہے ، ان کی دوسری انکوائری رپورٹ بھی منفی آئی ہے تو ان مریضوں کو اسپتال سے ڈسچارج کر دیا جائے گا۔ کمشنرنے بتایا کہ 13 مریضوں کے نمونے جمعہ کو کورونا کی جانچ کے لئے پھر سے بھیجے جائیں گے ، امید ہے کہ ان کی رپورٹ منفی آئے گی۔ کمشنر نے بتایا کہ کوروناوائرس سے اندور ڈویژن میں اب تک 6 مریضوں کی موت ہو چکی ہے۔ جس میںاندور کے 5 اورکھرگون کا ایک مریض شامل ہے۔ یہ لوگ موت کا شکار اس لئے ہوئے کیونکہ جب تک یہ اسپتال پہنچے تب تک کافی دیر ہو چکی تھی یقینی طور پر اسپتال آنے سے 7 سے آٹھ دن پہلے سے ہی یہ لوگ بیمار رہے ہوں گے۔ کیونکہ جب یہ لوگ اسپتال آئے تبھی انہیں براہ راست وینٹی لیٹر پر رکھنا پڑا۔ اس کے علاوہ یہ دیگر بیماریوں سے بھی دوچار تھے۔ اگر یہ جلدی اسپتال آ جاتے تو انہیں بچایا جا سکتا تھا۔ لہٰذا لوگوں سے درخواست ہے کہ کوروناکے علامات نظر آنے پر فوری طور پراسپتال پہنچیں۔ کمشنر نے کہا کہ انتظامیہ کی جانب سے ابھی لوگوں کو ہوم کوارنٹائن کرنے پر مزید زور دیا جا رہا ہے۔ کورونامثبت مریض کے رشتہ داروں کو ہی کوارنٹائن سینٹر بھیجا جا رہا ہے۔ اس کے علاوہ مثبت مریض کے علاقے میں رہنے والے دیگر لوگوں کو انہیں کے گھروں میں کوارنٹائن کیا جا رہا ہے۔کورونا وائرس کے علامات نظر آنے پر آئیسولیشن سینٹر بھیجا جا رہا ہے۔