کلکٹر جناب آشیش سنگھ نے منریگا کے تحت جاری کاموں کا لیا جائزہ


اُجین07جون (نیا نظریہ بیورو) کلکٹر جناب آشیش سنگھ نے آج ضلع اُجین میں منریگا کے تحت جاری کردہ روزگار پر مبنی کاموں کا معائنہ کیا .اس موقع پر انہوں نے مزدوروں سے تبادلہ خیال کیا۔ ان کی ادائیگی کے بارے میں معلومات حاصل کی ۔
معائنہ کے دوران ، کلکٹر نے ہدایت دی کہ منریگا کے تحت تعمیر کیے جارہے مختلف ڈھانچے کی بحالی کے کام کو بھی آگے بڑھایا جائے۔ ساتھ ہی انہوں نے پانی کے تحفظ کے لئے تیار کی گئی شجر کا ری کرنے اورا سٹاپ ڈیم کے کناروں پر ایسے پودے لگانے کو کہا جس سے مٹی کا کٹاﺅ کم ہو ۔اُجےن ضلع میں منریگا کے تحت 25 ہزار 795 مزدوروں کو روزگار فراہم کیا گیا ہے ۔ اس موقع پر ضلع پنچایت کے چیف ایگزیکٹو آفیسر جناب انکت آستھانہ بھی موجود رہے۔ کلکٹر نے آج ضلع اُجین کے گا¶ں باکانیہ کا دورہ کیا اور وہاں جاری نکاسی آب اور چیک ڈیم کی تعمیر کا معائنہ کیا۔ کلکٹر نے کہا کہ اس رقم کا 60 فیصد ایم این آر ای جی اے کے تحت تعمیرات کے لئے مزدوروں پر خرچ کیا جانا چاہئے۔ معائنے کے دوران کلکٹر کو معلومات دی گئی کہ مذکورہ گاﺅں میں 9 لاکھ 16 ہزار روپے کی لاگت سے چیک ڈےم کی تعمیر و نالے کاکام کیا جا رہا ہے جو کہ بارش سے قبل مکمل کر لیا جائے گا۔ معلومات دی گئی کہ
مزدوروں کو ہر روز 190 روپے فی روپے کی شرح سے فی ہفتہ اجرت کی ادائیگی کی جا رہی ہے ۔اسی گا ¶ں میں کنوئیں کی بھی تعمیر کا کام جاری ہے ۔ گا¶ں میں 124 مزدور کام کر رہے ہیں۔
منریگا سائٹ پر کورونا وائرس کے انفیکشن کی روک تھام کا اثربھی کیا گیا۔ تمام مزدور اور ملازم ما سک لگائے ہوئے کام کر رہے تھے ۔گاﺅںباکانیہ میں راجستھان سے لوٹ کر آئے مزدوروں سے کلکٹر نے بات چیت کی ۔انہوں نے بتایا کہ انہیں یہاں 190 روپے روزانہ مل رہے ہیں جبکہ راجستھان میں اسے کچھ زیادہ رقم مل جاتی تھی۔ انہوں نے بتایا کہ اگر یہاں کام مسلسل ملتا رہتا ہے تو وہ راجستھان نہیں جانا چا ہتے ۔ مزدورو ںنے بتایا کہ وہ گروپ میں راجستھان کے جیسلمیر سائیڈ پر زیرے کی کٹائی کا کام کرنے جاتے تھے اور لاک ڈا¶ن میں اپنے گھر لوٹ آ ئے تھے۔
اس کے بعد کلکٹرجناب آشیش سنگھ نے گھٹیا ضلع کے گا¶ں بور کھیڑی پہنچے اور وہاں منگریگا کے تحت تعمیر کیے جارہے تالاب کا معائنہ کر مزدوروں سے بھی تبادلہ خیال کیا۔ بتایا گیا کہ 4 لاکھ 90 ہزار روپے کی لاگت سے سو فیصد مزدوروں کی مزدوری پر مبنی ایک تالاب تعمیر کیا جارہا ہے ۔ یہاں جمع ہونے والے پانی سے کنو¶ں اور ٹیوب ویلوں کے پانی کی سطح میں اضافہ ہوگا۔یہاں بھی کچھ مزدور جیسلمیر سے واپس آئے تھے۔ یہاں سائٹ پر 41 مزدور کام کرتے ہو ئے پائے گئے ۔ قابل ذکر ہے کہ 22 اپریل سے ضلع اُجین میں منریگا کے کام شروع کردیئے گئے ہیں اور ضلع میں اس اسکیم کے تحت تقریباً 25795 مزدوروں کو کام دیا گیا ہے ۔اس وقت 1405 کام جاری ہے ضلع میں 4000 سے زیادہ مہاجر مزدور اسکیم سے منسلک ہوکر انہیں روزگار دیا گیا ہے۔