قومی یوم نوجوان پر دیواس میں ہوا پروگرام،صحافیوں نے پیش کی خراج عقیدت

دیواس12 جنوری(ڈاکٹر رئیس قریشی) ہندوستان کو نوجوانوں کا ملک قرار دینے اور نوجوانوں کو ہندوستان کی ریڑھ کی ہڈی کہنے والے سوامی وویکانند کے یوم پیدائش کو پورے ہندوستان میں قومی یوم نوجوان کے طور پر منایا جارہا ہے۔ اسی سلسلہ میں دیواس میں بھی ایک پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔مغربی بنگال کے شہر کولکتہ میں 12 جنوری 1863 کو ایک کائستھ گھرانے میں پیدا ہونے والے اس عظیم انسان کا خاندان تصوف سے وابستہ تھا جس کا ان پر بھی اثر ہوا۔سوامی رام کرشنا پرم ہنس کی رہنمائی میں آکرانہوں نے 25 سال کی کم عمری میں دنیاوی وابستگی ترک کردی اور خدا کی تلاش میں نکل پڑے۔اسی پر آپ کی خصوصی توجہ تھی، بعد میں آپ ایک عظیم روحانی یوگا گرو بن گئے۔ آپ ہمیشہ کہا کرتے تھے کہ اٹھو، جاگو اور تب تک مت رکو جب تک مقصد حاصل نہیں ہو جائے۔ آپ کے خیالات آج بھی متعلقہ ہیں اور بہت سے نوجوانوں کو متاثر کرتے ہیں۔ 4 جولائی 1902 کو بیلور مٹھ میں یوگ کرنے کے بعد دماغ پھٹ جانے سے صرف 39 سال کی عم میں ان کا انتقال ہوا۔
بیرون ملک ان کی جانب سے دی گئی تقاریر کا آج بھی سیناتان کے نوجوان طبقے میں چرچا ہے، جہاں انہوں نے بہت سے موضوعات پر گفتگو کرتے ہوئے غیر ملکیوں کو اپنی بے باک اور حاضر جوابی شخصیت کا تعارف کرایا۔دیواس کے کئی قلم کار ساتھیوں نے آج ان کی یوم پیدائش پر ان کے مجسمے پر پھول چڑھا کر انہیں خراج عقیدت پیش کیا۔ کانگریس کی طرف سے بھی انہیں یاد کرتے ہوئے انہیں خراج عقیدت پیش کیا گیا۔اس موقع پر صحافی، کانگریس کے ساتھی اور مختلف صحافتی تنظیموں کے عام لوگ موجود تھے۔پریس کلب کی جانب سے صدر اتل باگلیکر، نائب صدر شیکھر کوشل، سکریٹری چیتن راٹھور، شریک سکریٹری شیلیندر اڈوادیا، سینئر صحافی ونود جین، جگدیش سین، موہن ورما، انل سیکروار، ہیمنت شرما، ڈاکٹر رئیس قریشی، سوربھ سچن نے شرکت کی۔ پننا سنگھ، راجیش مالویہ، مرتوجا سیفی، فرید خان، فرید قریشی، امیت ویاس، میور ویاس، دھیرج سین، امیت راٹھور، راگھونندن سمادھیا اور دیگر کئی صحافی موجود تھے۔