محبت کو عام کرو، نفرت کوختم کرو: عارف مسعود نے اپنے اسمبلی حلقے کے مندر کے پجاریوں اور مساجد کے ائمہ موذنین میں جیکٹ تقسیم کر شروع کیا نیا سال

بھوپال یکم جنوری(نیا نظریہ بیورو)ایک ہی پلیٹ فارم سے پنڈتوں کی جانب سے سوستی واچن اور اماموں کے ذریعہ قرآن کی تلاوت کر پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔ جس میں نئے سال پر بطور تحفہ جیکٹ تقسیم کر ان کی دعاءاور آشیرواد کے ساتھ نئے سال کی شروعات کی۔
بھوپال سنٹرل اسمبلی حلقہ سے ایم ایل اے عارف مسعود کی طرف سے نئے سال کے موقع پر آج للی ٹاکیز میں واقع نیلم پارک میں ایک پروگرام کا انعقاد کیا گیا۔جس میں مرکزی اسمبلی حلقہ کے مندروں کے پجاریوں اور مساجد کے اماموں-مو ¿ذنوں(مذہبی رہنماوں) کو مدعو کیا اور نئے سال کا آغاز بطور تحفہ نئی جیکٹ پیش کر کے کیا۔
ایم ایل اے عارف مسعود نے اپنی اسمبلی کے مذہبی مقامات جس میں مساجد کے امام، مو ¿ذن اور مندروں کے پجاریوں کا خاص خیال رکھتے ہوئے مسلسل ان کے لئے کام کر رہے ہیں۔ اسی سلسلے میں نئے سال کے موقع پر بھوپال کی گنگا جمونی تہذیب کو برقرار رکھتے ہوئے سب کو ایک ساتھ ایک پلیٹ فارم پر مدعو کر ”محبت کو عام کرو، نفرت کوختم کرو“ کے نعرے کے ساتھ بطور تحفہ نئی جیکٹ تقسیم کر بھوپال کی تہذیب کو برقرار رکھنے کا کام کیا ہے
ایم ایل اے عارف مسعود نے اپنے حلقے میں ترقیاتی کاموں کے ساتھ ساتھ تہواروں کے موقع پر بھی اہل علاقہ کو فراموش نہیں کیا۔دیپوالی پر ساڑھی، راکھی پر بہنوں کو راکھی کا سامان، رمضان اور عید پر سیویاں وغیرہ بھجوائیں۔ساتھ ہی کورونا وبا کے دوران 30ہزار لوگوں کے گھر -گھرتک کھانا پہنچایا۔
ایم ایل اے عارف مسعود نے مزید کہا کہ آج اتنی بڑی تعداد میں میرے اسمبلی حلقہ کے تمام مذہبی رہنماجمع ہوئے ان سب کا شکریہ۔انہوںنے کہا کہ بھوپال میں بھائی چارے کی مثال قائم ہوئی ہے،آج نفرت بھرے ماحول میں ہمارے تمام ہی مذہبی رہنماﺅں نے یہاںاکٹھے ہو کر محبت کا پیغام دیا ہے، جس کی آج ملک میں اشد ضرورت ہے۔