کورونا کے بڑھتے معاملوں کے درمیان کالکا جی مندر میں شردھالوں کاداخلہ بند

نئی دلی۔ 30 دسمبر۔ دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (DDMA) نے دارالحکومت دہلی میں بڑھتے ہوئے کورونا کیسوں کے درمیان سختی بڑھا دی ہے۔ دراصل اسی کو دیکھتے ہوئے دہلی کے کالکاجی مندر میں ع شردھالوں کا مندوں کا داخلہ روک دیا گیا ہے۔ مندر انتظامیہ نے یہ فیصلہ ڈی ڈی ایم اے کی طرف سے جاری کردہ ہدایات کی وجہ سے لیا ہے۔ خیال رہے کہ اس سے قبل مہاراشٹر میں بھی بڑھتے ہوئے کورونا انفیکشن کے پیش نظر سائی بابا مندر میں رات کے درشن کو شردھالوؤوں کیلئے بند کردیا گیا تھا۔دہلی میں کورونا کیسز اور انفیکشن کی شرح میں اضافے کی وجہ سے GRPA کا لیول 1 یعنی ییلو الرٹ لاگو ہے، جس کے تحت مذہبی مقامات کھلے رہیں گے، لیکن عقیدت مندوں کا داخلہ ممنوع ہے۔ اس کے تحت کالکاجی مندر انتظامیہ نے عقیدت مندوں کا داخلہ روکنے کا فیصلہ کیا ہے۔ کالکاجی مندر کے پجاری نے کہا، ‘ہم دہلی حکومت سے درخواست کرتے ہیں کہ عقیدت مندوں کو باہر سے مورتی دیکھنے کی اجازت دی جائے۔ نئے سال کے موقع پر عقیدت مند عبادت کے لیے آتے ہیں۔ اگر دہلی حکومت عوامی مال کھول سکتی ہے تو مندر بھی عقیدت مندوں کے لیے کھلے رہ سکتے ہیں۔دارالحکومت میں کورونا کے خطرے کے پیش نظر بدھ کو ڈی ڈی ایم اے کا اجلاس ہوا۔ کووڈ انفیکشن کی صورتحال کے پیش نظر، راجدھانی دہلی میں فی الحال یلو الرٹ جاری رہے گا۔ تاہم دہلی میں حالات ابھی بھی قابو میں ہیں اور اسپتال میں بستر خالی پڑے ہیں۔ بتادیں کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں نئی دہلی میں 923 نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔ ذرائع کی مانیں تو دہلی ڈیزاسٹر مینجمنٹ کی میٹنگ میں وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے دہلی میں فی الحال یلو الرٹ جاری رکھنے کی بات کی۔