پربھورام چودھری کی قیادت میں کانگریس کے 200کارکنان بی جے پی میں شامل


بھوپال:23مئی(نیانظریہ بیورو)
ریاست میںضمنی اسمبلی انتخابات کاوقت بہت قریب ہے۔اس کے پیش نظر تی سیاسی جماعتیں سرگرم عمل ہیں۔ریاست میں سیاسی سرگرمی تیز ہوگئی ہے۔ ضمنی انتخاب سے قبل مدھیہ پردیش کی سیاست میں بہت سے رنگ دیکھنے کو مل رہے ہیں۔ اندور کے بعد ، رائسین کے تقریباً 200 کانگریس کارکن بی جے پی میں شامل ہوگئے ہیں۔ کانگریس کارکنوں نے سابق وزیر پربھو رام چودھری کی قیادت میں بی جے پی کی رکنیت حاصل کی ہے۔سابق وزیر پربھو رام چودھری کی قیادت میں لگ بھگ 200 کارکن بی جے پی کے ریاستی ہیڈ کوارٹر پہنچے ، جہاں وزیراعلیٰ شیو راج سنگھ چوہان اور بی جے پی کے ریاستی صدر وی ڈی شرما کی سربراہی میں کارکنان نے پارٹی کی رکنیت حاصل کی۔ سابق وزیر پربھرم چودھری سندھیا حامی رہنما ہیں جنہوں نے اقتدار کی تبدیلی کے دوران ہی انہوں نے بی جے پی میں شمولیت اختیار کی۔
آنے والے وقت میں اسمبلی ضمنی انتخابات ہونے والے ہیں۔ اس صورتحال میں ، پربھو رام چودھری نے طاقت کا مظاہرہ کرتے ہوئے اپنے علاقے کے سیکڑوں کارکنوں کو بی جے پی کی رکنیت دلادی ہے۔ اس سے قبل اندور کے سانویررہنماتلسی سلاوٹ کی قیادت میں کانگریس کارکنان نے بی جے پی میں شمولیت اختیارکی تھی۔
اسی کے ساتھ ایم پی بی جے پی نے ٹویٹ کرکے لکھا ہے کہ آج ونشنودت شرما اور شیو راج سنگھ چوہان کی موجودگی میں ، ضلع رائسین کے 200 سے زیادہ کانگریس کارکن بی جے پی میں شامل ہوگئے ہیں۔ اس موقع پر سابق ایم ایل اے پربھو رام چودھری اور ایم ایل اے رامپال سنگھ بھی موجود تھے۔