سیلون اور بیوٹی پارلروںکو راحت دینے کےلئے محکمہ داخلہ نے جاری کئے احکامات


بھوپال :21مئی(نیانظریہ بیورو)
مدھیہ پردیش میں سیلون اور بیوٹی پارلر آپریٹرز کو لاک ڈاو¿ن سے مشروط مستثنیٰ کردیا گیا ہے۔ مدھیہ پردیش حکومت نے کورونا وائرس سے بچنے کے لئے تمام انتظامات کے ساتھ ہیئر کٹنگ سیلون اور بیوٹی پارلر کھولنے کے احکامات جاری کیے ہیں۔محکمہ داخلہ کے جاری کردہ آرڈر میں یہ ہدایت دی گئی ہے کہ بخار ، نزلہ ، کھانسی یا گلے کی سوزش والے شخص کو سیلون یا پارلر میں داخل ہونے کی اجازت نہیں دیں۔ہدایت میں یہ بھی واضح کیاگیاہے کہ دوکان کے داخلی دروازے پرسینٹائزر دستیاب ہو،تاکہ ہرآنے جانے والے افراداس کا مستقل طور استعمال کرسکیں۔تمام دکانداروں کے لئے لازمی ہوگا کہ وہ چہرے پر ماسک ، ہیڈ کورز اور اپریلن کا استعمال کریں۔ تصرف تولیہ (ڈسپوزل تولیہ)ٹیشوپیپر ہر گاہک کے لئے الگ سے استعمال کرنا ہے۔ ایک بار استعمال ہونے والے تمام اوزار اور سامان کو صاف کرنا نیز(سینیٹائز)کرنا لازمی ہوگا۔ عملے کوبھی ہرفرد کے بال کاٹنے کے بعد اپنے ہاتھوں کو صابن سے دھونانیز سینٹائز کرنا لازمی ہوگا۔