تنظیم پہل کی بچوں کےلئے پہل: لاک ڈاون کی مدت میںگھرگھرجاکرکررہی کتابیںتقسیم

بھوپال:16مئی(نیانظریہ بیورو)
لاک ڈاو¿ن میں زندگی کو محفوظ رکھنے کے لئے ایک غیر اعلانیہ قید، بہت ساری مشکلات اور درجنوں پریشانیاں ، ان سب میں بچوں کا بھی خیال رکھنا ضروری ہے ، جو کتابوں سے متعلق ہیں۔ ادارہ کے اقدام نے مستقبل کے لئے علم کے ساتھ ساتھ صحتمند تفریحی مفید کتابوں کی ضرورت کو محسوس کیا اور اس کی دستیابی کے لئے پہل کی ہے۔ ادارے کے ممبران گھر گھر بچوں کو ایسی کتابیں مہیا کررہے ہیں ، تاکہ ان کے والدین بھی بچوں کے ساتھ ساتھ علم سے مستفید ہوسکیں۔
تنظیم سے وابستہ ثناءخان نے بتایا کہ اس اقدام نے بچوں کی زندگی میں روح پھونک دی ہے۔گھر گھر بچوں کو کتابیں تقسیم کرنے کا کام بستیوں میں چلنے والی لائبریری سے کیا جارہا ہے تاکہ بچے اس ماحول میں بور نہ ہوں۔ اس کے ساتھ ساتھ پڑھنے میں بھی اس کی دلچسپی برقرار رہے۔ ثناءنے کہا کہ ادارہ اس اقدام سے کارفرما ہے۔
متعلقہ علاقوں میں ہر اتوار کو کتابوں کی لائبریری چلائی جاتی ہے۔ جس میں یہاںآنے والے بچوں کو کھانے کے پیکٹ دیئے جارہے ہیں۔ ثناءخان نے کہا کہ اس دوران ، بچوں کے والدین کو اس بیماری سے بچنے کے لئے حفاظتی تدابیر کی وضاحت کی جارہی ہے۔ انہیں بتایا جارہا ہے کہ جسمانی فاصلہ برقرار رکھیں ، وقتا فوقتا ہاتھ دھونے اور ماسک لگانے سے ہمیں پریشانیوں سے بچایا جاسکتا ہے۔ ان لوگوں کو یہ بھی مشورہ دیا جارہا ہے کہ جب تک کوئی خاص کام نہ ہو تب تک وہ گھر سے باہر نہ نکلیں۔ ثناءخان نے بتایا مزیدبتایاکہ جب سے ہندوستان میں لاک آو¿ٹ کا اعلان کیا گیا ہے تب سے ،” پہل “ادارے نے مستقل طور پر امداد فراہم کرناشروع کردیاتھا۔ جس میں راشن کا انتظام کیا جارہا ہے۔انہوں نے بتایا کہ بستیوں کا سروے کرنے کے بعد راشن کے پیکٹوں کا بندوبست کیا جارہا ہے اورضرورت کے لحاظ سے ان تک پہنچایابھی جارہاہے، ان میں سے کچھ ایسی جگہیں بھی ہیں جہاں مزدور فٹ پاتھ پر رہائش پذیر ہیں۔ ایسے افراد کوپکاہوا کھانا اورراشن پہنچایاجارہاہے ۔