الیکشن کمیشن نے ریاست میں ہونے والے 24سیٹوں پر ضمنی انتخابات کی تیاری کی شروع


بھوپال:8مئی(نیانظریہ بیورو)
مدھیہ پردیش میں کووڈ 19کے درمیان 24 اسمبلی نشستوں پر ہونے والے ضمنی انتخابات کی تیاریاں الیکشن کمیشن کے ذریعہ شروع کردیگئیں ہیں، الیکشن کمیشن نے ریاست میںخالی اسمبلی سیٹیوں پر ضمنی انتخاب کا عمل شروع کردیاہے ، جبکہ دوسری طرف ، ان تمام اضلاع کے کلکٹرس کو ہدایت کی گئی ہے کہ پچھلے 3 سالوں سے ایک ہی جگہ کام کرنے والے افسران کو منتقل کیاجائے۔
غورطلب ہے کہ اب 15 اضلاع میں اسٹیٹ ایڈمنسٹریٹو سروس ، اسٹیٹ پولیس سروس اور دیگر افسران و ملازمین کا تبادلہ کیا جائے گا۔ اب الیکشن کمیشن کا ان افسران اور ملازمین پر زیادہ فوکس رہے گا جن پر براہ راست انتخابات میں الزامات عائد کیے جائیں گے۔وہیں کلکٹروں کوضمنی انتخابات کے لئے ووٹرفہرست اور پولنگ بوتھوں کی فہرست سمیت دیگر تیاریوں کے لئے بھی ہدایات دی گئی ہیں۔
10 مارچ کو ، 22 ارکان اسمبلی نے مل کر دیاتھااستعفیٰ :
اہم بات یہ ہے کہ 10 مارچ کو 22 ایم ایل اےز نے اجتماعی طور پر اپنے ایم ایل اے کے عہدے سے استعفیٰ دیدیا تھا ، جبکہ آگر مالوا اور جورا کی سیٹیں گذشتہ 5 ماہ سے ایم ایل اے کے انتقال کی وجہ سے خالی پڑی ہیں ، الیکشن کمیشن کو جوڑا اور آگر مالوا اسمبلی کی سیٹوں پر 31 مئی سے پہلے انتخابات کروانا ضروری ہے ، کیوں کہ یہاں 31 مئی کو 6 ماہ مکمل ہوں گے اور قواعد کے مطابق کوئی بھی خالی اسمبلی سیٹ کو6 ماہ سے زیادہ خالی نہیں چھوڑا جاسکتاہے۔وہیں ان 2 سیٹوں کے ساتھ ، الیکشن کمیشن مارچ میں ایم ایل اےز کے استعفے سے خالی شدہ 22 سیٹوں کے انتخابات کے لئے بھی تیاری کر رہا ہے۔ وہیں فروری میں پوری ریاست میں ووٹر لسٹ تیار کی گئی تھی ، اب اسے اپ ڈیٹ کرنے کی ضرورت ہے۔واضح رہے کہ ان تمام اسمبلی حلقوں میں پولنگ بوتھ سیاسی جماعتوں کے اعتراضات کے بعد پہلے ہی ترتیب دیئے گئے ہیں۔پولنگ بوتھوں کو تبدیل کیا جاسکتا ہے۔اس کے علاوہ گزشتہ 3 سالوں سے تعینات افسران کو اگلے 10 دن کے اندر دوسری جگہ منتقل کیا جانا چاہئے۔ آگر مالوا اسمبلی حلقہ کے ایم ایل اے منوہر اونٹ اور مرینا کے جورا سے بنواری لال شرما انتقال کر گئے ہیں۔اب ان سیٹوں پرنئے امیدوار بھی اتارے جائےں گے۔ اس لئے دونوں سیاسی جماعتیں یہ سیٹیں جیتنے کے لئے بیقرارہیں۔