ریڈژون کوگرین میں لانے کی کوششیں تیز:


راجدھانی کے مختلف علاقوں میںایک ہی دن میں لئے گئے 1200 سے زیادہ نمونے
بھوپال:6مئی(نیانظریہ بیورو)
راجدھانی بھوپال کو ریڈ سے گرین ژون لانے کے لئے انتظامی مشق شروع ہوگئی ہے۔ انتظامیہ کی ٹیم ایسے تمام علاقوں میں خصوصی توجہ دے رہی ہے ، جہاں مسلسل متاثرہ مریض سامنے آ رہے ہیں۔ اب ان تمام حساس علاقوں میں محکمہ صحت کی ٹیم بنا کر تفتیش کے دائرہ کار میں توسیع کی جارہی ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ، انتظامیہ اب راجدھانی میں کورونا انفیکشن کی روک تھام کے لئے مختلف حکمت عملی پر کام کر رہی ہے۔
بتایاجاتاہے کہ وہ علاقہ جہاں کورونا مثبت مریض پایا گیا ہے۔ اس کا پہلا رابطہ ڈھونڈ کر اس کے آس پاس کے لوگوں کو بھی کورنٹائن کیا جارہا ہے۔ جس کے بعد محکمہ صحت کی ٹیم کے توسط سے ہیلتھ ٹیسٹ کا سلسلہ جاری ہے۔ اسی کے ساتھ ہی ان کے نمونے لینے کے لئے بھی کارروائی کی جارہی ہے۔
1200 سے زیادہ نمونے لئے گئے:
گزشتہ روز راجدھانی کے منگلوارہ، اسلام پورہ، چھاو¿نی سمیت دیگرقرب وجوارکیگھنی آبادی والے علاقے سے بڑے پیمانے پر نمونے لئے گئے ہےں۔ کورونا کے مثبت نتائج پر ، آس پاس کے علاقے کو مشمولاتی علاقہ قرار دیا جارہا ہے اور وسیع پیمانے پر اسکریننگ اور سینٹائزنگ کی جا رہی ہے۔ چھاو¿نی علاقے میں 500 سے زیادہ نمونے لئے گئے ہیں۔ اسی طرح اسلام پور ہ علاقے میں بھی سروے ٹیم نے
لوگوں کے نمونے لئے ہیں۔ گاندھی میڈیکل کالج کے ذریعہ آٹھ سو نمونے جانچ کے لئے احمد آباد بھیجے گئے ہیں۔کلکٹر ترون پتھوڑے کی ہدایت پر شہر کے مختلف علاقوں میں اس نوعیت کی کارروائی بڑے پیمانے پر جاری ہے۔ کلکٹر نے باہر سے نائب تحصیلداروں کو میدان میں رہ کر کارروائی کرنے کی ہدایت کی ہے۔ دیگر انتظامات کے لئے افسران کو بھی ڈیوٹی پرتعینات کردیا گیا ہے۔