ایم پی حکومت ریاست کے مزدوروں کا ادا کرےگی ریل کاکرایہ


بھوپال:3مئی(نیانظریہ بیورو)
لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے ملک بھر میں مزدورطبقہکسی نہ کسی ریاست میں پھنسے ہوئےہیں۔ ریاست اور مرکزی حکومت مل کر ان کو لانے کی کوشش کر رہی ہے۔ مدھیہ پردیش کے ایسے بہت سے مزدور دوسری ریاستوں میں پھنس چکے ہیں۔ جس کے لئے خصوصی ٹرینیں چل رہی ہیں۔ لیکن ریلوے نے مزدوروں سے کرایہ بھی لیاہے ۔جس کی وجہ سے میڈیانے اس خبر کو نمایاں کیا۔ اب وزیراعلی شیوراج نے بھی مزدوروں کی حالات کاجائزہ لیاہے۔در حقیقت ، وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ چوہان خود ناسک سے لائے ہوئے مزدوروں سے ٹرین کے ٹکٹ سے رقم لینے کی خبر ظاہر کرنے کے بعد منظرعام پر آئے اور انہوں نے ٹویٹ کرکے اعلان کیا کہ ، بحران کی اس گھڑی میں ، میری مزدور بہن بھائی کو بالکل بھی پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ میں پوری طاقت کے ساتھ آپ کے ساتھ کھڑا ہوں۔ ہم مرکزی حکومت اور وزارت ریلوے کے ساتھ مل کر بات کرنے اوراس کاحل تلاش کرنے کوشش کر رہے ہیں تاکہ آپ کو مختلف ریاستوں سے خصوصی ٹرین کے ذریعے وطن واپس لایا جاسکے۔اس دوران آپ کاپورا کرایہ ریاستی حکومت اداکرے گی۔غورطلب ہے کہ مزدروں کولیکر خصوصی ٹرین بھوپال پہنچی۔ ریاست بھر سے 347 مزدوراس ٹرین میں تھے۔ جن سے ریلوے نے ٹکٹ کے پیسے بھی لئے۔ جیسے ہی یہ خبر سامنے آئی۔ میڈیا نے ریاست کی عوام اور حکومت کے سامنے ترجیحی خبروں کو سامنے رکھ کر اپنا فرض ادا کیا تھا۔ اس معاملے پر اپوزیشن میں بیٹھے کانگریس کے تمام بڑے لیڈران نے بھی بی جے پی پر مزدوروں کے ساتھ ناانصافی کا الزام عائد کیا۔ اس کے بعد ، خود شیو راج نے آج ٹویٹ کرکے اعلان کیا کہ مزدوروں سے کوئی رقم نہیں لی جائے گی۔