منگیری لال کا خواب نہیں دیکھے بی جے پی :کانگریس

منگیری لال کا خواب نہیں دیکھے بی جے پی :کانگریس
بھوپال:3مارچ(نیانظریہ بیورو)
ٍ کانگریس نے بی ایس پی ایم ایل اے رام بائی کے معاملے میں دگ وجے سنگھ کے الزام کو درست بتاتے ہوئے کہا ہے کہ بی جے پی اقتدار سے باہر پانی کے بغیرمچھلی کی طرح تڑپ رہی ہے۔ اس سے پہلے بھی حکومت کو توڑنے کی کوشش میں وہ ناکام ہوچکے ہیں اور اب بھی ایسا ہی ہوگا ، لہذا بی جے پی کو اب منگیری لال کا خواب دیکھنا چھوڑ دینا چاہئے۔کانگریس کا کہنا ہے کہ وزیر اعلی کمل ناتھ کے کام سے متاثر ہوکر بی جے پی لیڈران اسمبلی کے اندر اور باہر کھلے عام ان کی تعریف کر رہے بی جے پی پر الزامات کے بعد ، مدھیہ پردیش کانگریس کے میڈیا انچارج کی صدر شوبھا اوجھا کا کہنا ہے کہ واضح طور پر بی جے پی اقتدار کے باہر بغیرپانی کی مچھلی کی طرح تلملارہی ہے۔ وہ اقتدار میں آنے کے لئے مسلسل کوشش کرتی رہی ہے۔ شوبھا اوجھا کا کہنا ہے کہ بی جے پی کو ایک بات سمجھنی چاہئے کہ مدھیہ پردیش میں نہ کانگریس ، نہ آزاد ، نہ ہی ایس پی اور نہ ہی بی ایس پی کے ایم ایل اےز فروخت ہونے والے ہیں۔شوبھا اوجھا نے کہا کہ جس طرح بی جے پی نے کرناٹک اور گوا میں ہارس ٹریڈنگ کر حکومت بنائی ہے ۔ وہ مدھیہ پردیش میں اس طرح حکومت نہیں بنا پائے گی ۔بی جے پی اسے اچھی طرح سے سمجھ لیں کہ جب بھی وہ اس طرح کی کوشش کریں گے انہیں ناکامی کامنھ ہی دیکھناپڑے گا۔ وزیر اعلی کمل ناتھ کے اچھے کاموں سے متاثر ہوکر بی جے پی کے ایم ایل اے نے حکومت کی حمایت کی تھی۔ اسے بھی مت بی جے پی والوں کونہیںبھولنا چاہئے۔ شوبھا اوجھا نے کہا کہ بی جے پی کو منگیری لال کا خواب دیکھنا چھوڑدینا چاہئے ، کیوں کہ ریاست کی عوام سمیت بی جے پی کے بہت سے ارکان اسمبلی کھلے عام ریاست کے وزیر اعلی کمل ناتھ اور کانگریس حکومت کے کام کاج کی تعریف کر رہے ہیں۔