لاک ڈاون 3: مرکزی حکومت عوام کوراحت پہنچانے کاطریقہ بھی بتائے :کانگریس


بھوپال:2مئی(نیانظریہ بیورو)
تیسری مرتبہ لاک ڈاو¿ن میں توسیع کے حکومت کے فیصلے پر مدھیہ پردیش کانگریس نے کہا ہے کہ ، حالات کو دیکھ کر لاک ڈاو¿ن میں اضافہ کرنا مناسب ہے ، لیکن حکومت کو عوام کو ریلیف دینے کے لئے سرکاری طورپرکی جارہی تیاریوں اور منصوبوں کو بھی بتانا چاہئے ، جس کی وجہ سے طویل عرصے سے لاک ڈاو¿ن کا دباو¿ رہاہے۔وہیں اس وقت مایوسی کے عالم میں رہنے والے غریب ، مزدور اور عام عوام کو سرکار کی طرف سے کچھ توراحت ملنی چاہئے تھی۔ کانگریس کا کہنا ہے کہ ، ایک طرف حکومت نے ایسا ماحول پیدا کیا تھا کہ ، لاک ڈاو¿ن میں راحت ملے گی ، لیکن اچانک لاک ڈاو¿ن میں اضافہ کرنے سے ، عوام میں اضطراب اور افسردگی بڑھ رہی ہے۔غورطلب ہے کہ مدھیہ پردیش کانگریس کے میڈیا شعبے کے نائب صدر بھوپندر گپتا کا کہنا ہے کہ حکومت نے لاک ڈاو¿ن میں 17 مئی تک اضافہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس دوران غریب اور مزدور اس فیصلے سے پریشان زیادہ ہورہے ہیں ، اس پر غور کیا جانا چاہئے۔ حکومت کو چاہئے کہ وہ اپنی تیاری کو عوام کے سامنے لائے اوربتائے کہ وہ عوام کوراحت پہنچانے کے لئے کیااقدام کررہی ہے ،حکومت پھنسے ہوئے طلباء، غریبوں ، مزدوروں اور کسانوں کی مدد کیسے کرے گی۔ اسپتالوں میں کس طرح انتظام کیا گیا ہے۔ ان سارے منصوبوں کو عام کیا جائے۔بھوپندر گپتا نے کہا ہے کہ عوام اتنے دنوں سے راحت کے منتظر تھے ،لیکن حکومت نے خود ہی ایک ایسا ماحول بنا دیا تھا کہ دو تین دن میں لاک ڈاو¿ن کھل جائے گا۔ حالات ایسے ہیں کہ ، لاک ڈاو¿ن کو بڑھانے میں کوئی حرج نہیں ہے ، لیکن ان چیزوں کو عوام کے ساتھ بانٹنا چاہئے ، تاکہ معاشرے میں کوئی افسردگی اور ذہنی طور پر مایوسی نہ ہو۔ لہذا ، حکومت کو اپنا منصوبہ عام کرنا چاہئے۔