سپریم کورٹ کے فیصلہ سے ووڈافون-آئیڈیا نے لی راحت کی سانس

نئی دہلی: سپریم کورٹ نے انکم ٹیکس معاملے میں ووڈافون-آئیڈیا کو بدھ کے روز بڑی راحت دیتے ہوئے انکم ٹیکس ڈپارٹمنٹ کو 733 کروڑ روپے واپس کرنے کی ہدایت کی ہے۔ جسٹس اودے امیش للت اور جسٹس ونیت سرن کی بنچ نے محکمہ انکم ٹیکس کو یہ حکم دیا کہ وہ ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی کو سال 2014-15 کے لئے چار ہفتوں کے اندر اندر 733 کروڑ روپے واپس کرے۔
عدالت نے کہا کہ جہاں تک سال 2014-15 کا تعلق ہے، حتمی تشخیص آرڈر (انکم ٹیکس) ایکٹ کی دفعہ 143 (3) کے تحت منظور کیا گیا ہے، یہ ظاہر کرتاہے کہ درخواست گزار (ٹیلی کمیونیکیشنز فرم) 733 کروڑ روپے کے ریفنڈ کا حقدار ہے۔
ووڈافون آئیڈیا نے عدالت میں عرضی داخل کرکے محکمہ انکم ٹیکس سے 4700 کروڑ روپے ریفنڈ کی مانگ کی تھی۔ ٹیلی کمیونیکیشن کمپنی کا کہنا تھا کہ محکمہ نے 2014-15 سے 2017-18 کے انکم ٹیکس کا ریفنڈ نہیں کیا۔ کورٹ نے درخواست پر سماعت کرتے ہوئے بدھ کو کل 733 کروڑ روپے کے رقوم کی واپسی پر مہر لگائی ہے۔