سندھیا حامی لیڈرکے اعتراض کے بعد بی جے پی نے کیا ٹینڈر منسوخ


بھوپال/گوالیار:29اپریل(نیانظریہ بیورو)
کمل ناتھ حکومت میں خاتون واطفال ترقیاتی محکمہ میں وزیررہی امرتی دیوی نے اسمارٹ فون خریدی ٹینڈر میں بدعنوانی کے الزام لگائی ہیں۔ان کی اعتراض کے بعد ریاست کی بی جے پی حکومت نے 75ہزار اسمارٹ فون خریدی ٹینڈر کو منسوخ کردیا ہے۔ جس کے بعد آنگن باڑی کارکنان کو فون دیئے جانے کامنصوبہ ادھورا رہ گیا ہے۔ وہیں کانگریس نے امرتی دیوی پر جوابی حملہ بولتے ہوئے انہیں اپنے گریباں میں جھانکنے کی نصیحت کی ہے۔ سیاست کے کھیل بھی نرالے ہوتے ہیں جب تک ایک ساتھ ہوتے ہیں تو پارٹی اور اس کے لیڈر سے بڑھ کر کچھ نہیں ہوتا اور جب پارٹی بدل جاتی ہے تو جو پارٹی چھوڑکر آتے ہیں اس میں اور اس کے لیڈران میں صرف برائی ہی نظر آتی ہے۔ تازہ معاملہ اسمارٹ فون خریدی ٹینڈر سے جڑا ہے۔ کانگریس حکومت میں خاتون واطفال ترقیاتی وزیر رہیں سندھیا حامی امرتی دیوی کے مشورے پر وزیراعلیٰ کمل ناتھ نے آنگن باڑی کارکنان کے لئے اسمارٹ فون خرید کربانٹنے کی منصوبے کو منظوری دی تھی۔ لیکن حکومت بدلنے کے بعد یہ منصوبہ کھٹائی میں پڑگیاہے۔ اتنا ہی نہیں امرتی دیوی کی اعتراض کے بعد اسمارٹ فون خریدی کے ٹینڈر کو شیوراج نے منسوخ کردیا ہے۔ سابق وزیر امرتی دیوی کے مطابق دور دراز گاﺅں میں خدمات انجام دینے والی آنگن باڑی اور آشا کارکنان کے لئے 75ہزار اسمارٹ فون خریدنے کے منصوبہ کو منظوری ملی تھی۔ محکمہ نے اس پر کارروائی شروع کی تو حکومت نے متعلقہ کمپنی این ایس انفرا کو اس کا ٹینڈر دینا منظور کیا اور یہ ٹینڈر جلد بازی میں وزیراعلیٰ کے استعفیٰ کے ایک دن قبل 22مارچ کو جاری کردیا ۔ امرتی دیوی نے کہا کہ جب خریدی کی بات کی جارہی تھی اس کمپنی کے گھٹیا اسمارٹ فون پر میں نے اعتراض کیا تھا وزیراعلیٰ کمل ناتھ اور محکمہ کے افسران کو ٹینڈر نہیں کرنے کے لئے خط بھی لکھاتھا ،لیکن وزیراعلیٰ نے افسران سے مل کر 7950روپے کے حساب سے مہنگے موبائل کا ٹینڈر دے دیا۔ جبکہ اس سے کم قیمت پر اچھی کوالیٹی کا اپگریڈ ورزن موبائل بازار میں موجود ہے۔ امرتی دیوی نے فون خریدی ٹینڈر میں بڑے پیمانے پر بد عنوانی کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ کمل ناتھ جی نے ہر معاملے میں خود مرضی چلائی ہے۔ اب جب بی جے پی کی حکومت بنی تو میں نے وزیراعلیٰ شیوراج سنگھ کو معلومات دی جس کے بعد ٹینڈر منسوخ کردیا گیا ہے۔ بہرحال فون غیرمعیاری تھے یا بدعنوانی ہوئی ہے یہ جانچ کا موضوع ہے ، لیکن ٹینڈر منسوخ ہونے سے اب آنگن باڑی کارکنان اور آشا کارکنان کو فون کب ملیںگے کہنا مشکل ہے۔
کانگریس کا جوابی حملہ ،پہلے اپنے گریباں میں جھانکےں:
وہیں امرتی دیوی کی بدعنوانی کے الزام پر کانگریس نے چٹکی لےتے ہوئے جوابی حملہ بولا ہے۔ شہر ضلع کانگریس ترجمان دھرمیندر شرما نے صحافیوں سے گفتگو میں کہا کہ امرتی دیوی بے توکا الزام لگارہی ہےں،وہ خود بدعنوانی میں ملوث ہیں، سب جانتے ہیں کہ کانگریس حکومت میں رہتے ہوئے کیسے ان کا اور دوسرے سندھیا حامی سابق وزیر کا کریشر اور ریت کانکنی کو لے کر تنازعہ ہوا تھا۔ اور وہ سندھیا کے سامنے احتجاج پر بیٹھی تھی پھر جب سندھیا نے دونوں حامی وزیر وں کو سمجھوتا کر خاموش رہنے کے لئے کہا تھا تب معاملہ ختم ہوا تھا۔ کانگریس ترجمان نے کہا کہ 15مہینے تک ان لوگوں نے اپنی اسمبلی کو اپنی باپ کی جاگیر سمجھ رکھا تھا۔ انہوں نے ان عوام کی بے عزتی کی ہے جنہوں نے کانگریس کے ٹکٹ پر انہیں جتایا اتنا ہی نہیں ماں جیسی پارٹی کو دھوکہ دیا ۔ ایمانداری کی باتیں ان کی زبان سے اچھی نہیں لگتی،یہ اپنے گریباں میں جھانکیں ۔ انہوں نے کہا کہ عوام ہی انتخاب میں انہیں جواب دیگی۔