ملازمین نے کہا ہمیںنہ توماسک اور نہ ہی سینیٹائزرکیاگیافراہم

محکمہ صحت کے خلاف محاذ:

بھوپال:27اپریل(نیانظریہ بیورو)
راجدھانی بھوپال کے ضلع اسپتال میں اب کورونا وائرس نے اپنی گرفت میں لے لیا ہے۔جب جے پی ہسپتال کے 5 ملازمین کورونا مثبت پائے گئے ہےں۔ تب سے یہاں کے ملازمین میں خوف و ہراس کا ماحول ہے۔جبکہ بہت سارے ملازمین کی رپورٹ آنا باقی ہیں۔جس کی وجہ سے ملازمین صحت نے اعلی عہدیداروں کے خلاف محاذ کھول دیا ہے۔ملازمین نے عہدیداروں پر عدم توجہی کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملازمین کے ساتھ ناانصافی کی جارہی ہے۔ ریاستی صدر سریندر سنگھ کوراو کا کہنا ہے کہ ، جےپی اسپتال کے ہمارے 5 ملازمین کورونا وائرس سے متاثر ہیں۔ دوسرے ملازمین جو اس کے ساتھ رابطے میں آئے تھے انھیں بھی آئی سو لیشن نہیں کیا جارہا ہے۔ کچھ ملازم سنگاری کے لئے گئے تھے لیکن سپرنٹنڈنٹ نے انہیں دوبارہ کام پر بلالیا ہے۔اس صورتحال میں ، دوسرے ملازمین میں بھی کورونا انفیکشن کا خطرہ ہے۔ ہمارے بہت سے ملازمین کی کورونا وائرس ٹیسٹ کی رپورٹ آناابھی باقی ہے۔ ہمیں یہ تک نہیں معلوم کہ کون مثبت ہے اور کون منفی۔ ملازمین میں خوف کا ماحول ہے۔ اس کے علاوہ ہمارے پاس حفاظتی سامان نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں نہ تو N-95 ماسک فراہم کیا گیا ہے اور نہ ہی سینیٹائزر۔ اس صورتحال میں ہم کیسے کام کریں گے۔ ملازمین کا کہنا ہے کہ ہمیں قانونی چارہ جوئی کے لئے تحریری احکامات دیئے جائیں۔ وہ تمام ملازمین جو مثبت ملازمین سے رابطے میں ہیں۔ ان کو فوری طور پر آئی سولیشن کیا جائے۔ ہمارے ساتھ ہونے والی ناانصافی کو روکیں ورنہ ہم کام بند کردیں گے۔