حکومت کی جانب سے جاری تدابیرپربھی عمل ضروری:مفتی محمدشاہد


بھوپال:25اپریل(نیانظریہ بیورو)
میرے پیارے بھائیوں جیسا کہ آپ بخوبی اس بات سے واقف ہیں رمضان المبارک کا مہینہ چل رہاہے اور اس ضمن میں روزہ بھی رکھاجارہا ہے اور عبادت میں بھی لوگ بہت مصروف ہیں۔ اور یہ مہینہ نیکیوں سے مالامال ہونے کا مہینہ ہے۔لیکن اس وقت جوملک میں حالات رونما ہیں وہ کسی بھی انسان سے پوشیدہ نہیں ہے جسکی وجہ سے روز ہماری حکومت کی طرف سے اس مہلک بیماری وبائی امراض سے بچنے کے بہت سے تدابیر بتائے جارہے ہیں اور اسکے لئے لاک ڈان کابھی سلسلہ جاری ہے جب تک یہ لاک ڈان کا سلسلہ جاری ہے آپ حضرات حکومت کی طرف سے بتلائے ہوئے تمام تدابیر کو بڑے احترام کیساتھ اسکو عمل میں لائیں کیونکہ اسمیں تمام لوگوں کی حفاظت ہے اور نمازوں کو اپنے گھروں میں ہی ادا کریں۔اس موقع سے ہمیں اپنے گھروں میں رہکر دو یا تین آدمی جماعت کرکے پنج وقتہ نماز اور نماز تراویح کا اہتمام کرلیں۔جس گھر میں حافظ قرآن ہیں بہترین موقع ہے وہ ایک دوسرے کا قرآن سن لیں اسی طرح مساجد میں بھی ایک امام اور تین آدمی جماعت کیساتھ نماز اور تراویح ادا کرسکتے ہیں۔اور دن رات تلاوت قرآن کے علاوہ جووقت ملے اسمیں کلمہ طیبہ،آیت کریمہ،استغفار،اور پھر کثرت سے درود شریف کا اہتمام کریں۔اور خاص طور پر رو دھو کر اللہ کو راضی کرکے اپنے گناہوں کا اقرار کرتے ہوئے دعاءکریں کہ ، یااللہ یہ سب ہماری بداعمالیوں کا نتیجہ جس کی وجہ سے آپ ہم سے ناراض ہوگئے ہیں اور یہ دن ایسے آگئے ہیں، لھٰذا آپ ہم سب کو معاف فرما دیجئے اے اللہ ہماری حفاظت فرما پورے ملک کے ایک ایک انسان مرد عورت کی حفاظت فرما ۔اس وبائی بیماری کو ہمارے اس ملک ہندوستان سے دور فرما یہاں تک کہ پوری دنیا سے دور فرما ہم کو آزمائیشوں اور امتحان میں مبتلاءنہ فرما۔میں دعاءگو ہوں اللہ مجھے بھی عمل کی توفیق عطاءفرمائے اور آپ کو بھی۔