ملت کے نوجوانوں نے ضرورت مندوں تک امدادپہنچانے کےلئے سنبھالامورچہ


بھوپال:19اپریل(نیانظریہ بیورو)
کوروناانفیکشن کی وجہ سے پورے ملک میں لاک ڈاو¿ن نافذہے۔اس دوران مدھیہ پردیش کی راجدھانی میں بھی لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے ضرورت منداوریومیہ مزدورکے سامنے معاشی بحران نے اثردکھاناشروع کردیاہے۔لاک ڈاو¿ن کاآج چھبیسواں دن ہے۔مزدورطبقہ اس وقت بہت زیادہ پریشانی میں مبتلاہے۔کیوں کہ یہ لوگ روز اجرت پرکام کرتے تھے اورشام خاندان کے ساتھ بیٹھ کرسکون سے دوروٹی کھالیاکرتے تھے۔لیکن اس وقت لاک ڈاو¿ن نے انہیں معاشی طورپربہت کمزورکردیاہے۔یہ نہ تواجرت کے لئے کہیں جاسکتے ہیں اورنہ ہی کوئی کام چل رہاہے۔اس لئے یہ طبقہ پوری طرح سے ضرورت مندوں سے ہمدردی رکھنے والوں پرمنحصرہے۔لوگوں کی مددکرنے والے بھی اس وقت میدان میں کچھ کم افراد نہیں ہیں۔لیکن ہرشخص ہرضرورت مندتک نہیں پہنچ سکتا۔ایسے میں ملت کے کچھ نوجوانوں نے مورچہ سنبھال رکھاہے۔ایسے ہی ایک نوجوان جوپیشے سے نیوزپیپرایجنسی چلاتاہے۔ان سے ان غریب اورمزدورطبقہ کی پریشانی دیکھی نہیں گئی۔انہوں نے اپنی حیثیت کے مطابق اپنے کچھ دوستوں کے ساتھ ایسے خاندان کی نشاندہی کی جواصل میں نہایت غریب اورغیرت مندہیں۔ڈی آئی جی بنگلے واقع محمدزبیرنے اپنی نیوز ایجنسی کی آفس کوہی کچن بنادیا۔ اب وہ یہیں سے روزانہ دوسے ڈھائی سوافراد کے لئے کھاناپکاکر ضروتمندوںکے گھرتک دونوں وقت اپنے آس پاس کے علاقے میں پہنچانے کابندوبست کرہے ہیں۔ساتھ ہی انہوں نے رمضان المبارک کے لئے راشن کٹ کابھی انتظام کیاہے،جس میں تقریباً پندرہ دن کےلئے کھانے پینے کی اشیاءکے علاوہ ضروری سامان مہیاکرایاگیاہے۔