رمضان المبارک کے پیش نظر ضلع انتظامیہ افسران اورعلمائے کرام کی ہوئی میٹنگ


لاک ڈاﺅن پر کیاجائے عمل
ضلع انتظامیہ نے اشیائے خوردونوش کی فراہمی کا دلایا بھروسہ
اُجین18اپریل (نیا نظریہ بیورو)ماہ رمضان المبارک کی آمد کو لے کر ضلع انتظامیہ نے شہر قاضی اور دیگر آئمہ کرام کے ساتھ آج پولیس کنٹرول روم پر ایک اہم میٹنگ منعقد کی۔ اس میٹنگ میں اتفاق رائے سے یہ طے پایا کہ ماہ رمضان المبارک میں بھی لاک ڈا¶ن پر پوری طرح سے عمل کیا جائے گا۔ شہر قاضی جناب خلیق الرحمن نے کہا کہ اس رمضان المبارک کے موقع پر کوئی بھی عمل ایسا نہ ہو کہ جس سے اس وبائی مرض کے پھیلنے میں مدد ملے ۔ آپ نے انتظامیہ سے رمضان المبارک کے دوران کھجور، پھل ، دودھ اوراشیاءخوردو نوش کی فراہمی کو یقینی بنانے کی اپیل کی ۔ اس موقع پر کلکٹر جناب ششانک مشرا نے کہا کہ اس میٹنگ میں رمضان المبارک کے دوران مسلم سماج کے مدعوں کو سمجھا اور انہیں ضروری سہولیت مہیا کرائی جائے گی ۔سماج کے تمام لوگوں سے اپیل کی گئی ہے کہ رمضان میں بھی نماز گھروں کے اندر رہ کرہی پڑھیں۔ہم کورونا کے خلاف بہت بڑی لڑائی لڑ رہے ہیں اور ہم تبھی اس میں کا میاب ہوں جب آپ کا تعاون حاصل ہو گا ۔ہم لوگوں کو سوشل ڈسٹنسینگ بنانی ہے ۔ شہر قاضی نے ضلع ا نتظامیہ کو صد فیصد تعاون کی یقین دہانی کرائی ۔اس موقع پر اُجین ایس پی جناب سچن اتلکرنے کہا کہ رمضان کے تعلق سے جو ا نتظامات ضلع انتظامیہ کی جانب سے کئے جانے ہیں وہ بروقت کئے جائیں گے ۔ کنٹینمنٹ علاقوں میں بھی انتظامات کو یقینی بنایا جائے گا۔ لوگ گھرو ں میں ہی نماز پڑھیں ۔لاک ڈاﺅن اور کرفیو مکمل طور پر نافذ رہے گا ۔اس لئے لاک ڈاﺅن کی خلاف ورزی نہیںہو نی چائیے ۔لوگ قطعی ایک جگہ جمع نہ ہوں ۔ سو شل ڈسٹنسینگ کا خاص خیال رکھیں۔