شدت کی دھوپ میں کوروناسے ملک کوبچانے کےلئے پولس کاعمل قابل تعریف


بھوپال:18اپریل(نیانظریہ بیورو)
مدھیہ پردیش میں جیسے جیسے کورونا کا وبا پھیلتا جارہا ہے ، گرمی کی شدت بھی تیزسے تیز تر ہوتی جارہی ہے۔ اس تیز گرمی کے دوران پولیس اہلکار کورونا کے خلاف سڑکوں پر لڑ رہے ہیں۔ اس صورتحال میں پولیس اہلکاروں کو تیز دھوپ سے بچانے کے لئے ، محکمہ نے چیکنگ پوائنٹ پرہی ایک خیمہ لگایا ہے ، جس میں کرسیاں اور پیاس بجھانے کےلئے پانی بھی مہیا کیا گیا ہے۔ اسی دوران بعض چوراہوں پر پولیس اہلکاروں کے لئے چھتری بھی لگائی گئی ہیں۔غورطلب ہے کہ کووڈ19 کی وبا نے پوری دنیا میں پیرپھیلادیا ہے۔ کورونا کی وبا ملک اور ریاست میں بھی مسلسل پھیل رہی ہے ، لیکن محکمہ صحت اور پولیس محکمہ کےجوان اس لڑائی میں کورونا کو شکست دینے کی پوری کوشش کر رہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ محکمہ صحت کا عملہ اسپتالوں میں دن رات خدمات انجام دے رہے ہیں۔ جبکہ پولیس اہلکار 24 گھنٹے سڑکوں پر کھڑے رہتے ہیں ، اب کورونا کے ساتھ بڑھتا ہوا درجہ حرارت بھی پولیس کے لئے چیلنج بن گیا ہے۔ لہذا تمام چیکنگ پوائنٹس پر تعینات پولیس اہلکاروں کو گرمی سے بچانے کے انتظامات کیے گئے ہیں۔ ای چیکنگ پوائنٹس پر خیمے لگائے گئے ہیں۔ اس کے ساتھ ہی ڈیوٹی پرتعینات ملازمین کے بیٹھنے کے لئے کرسیاں بھی رکھی گئی ہیں۔راجدھانی بھوپال کے نئے اور پرانے شہر میں دو درجن سے زیادہ چیکنگ پوائنٹس قائم کیے گئے ہیں۔ اس کے علاوہ شہر میں آنے والے اہم راستوں پر بھی بیریکیڈ ڈال کر چیکنگ پوائنٹس بنائے گئے ہیں۔ ان تمام مقامات پر ، سورج کی روشنی سے بچنے کے لئے خیموں میں، کرسیاں ، پینے کے پانی اور چھتریوں کا انتظام کیا گیا ہے۔ پولیس حکام کا خیال ہے کہ تمام ملازمین لاک ڈاو¿ن میں مقررہ وقت سے زیادہ ڈیوٹی سرانجام دے رہے ہیں اور اس صورتحال میں ان کے دباو¿ کو کم کرنے کے لئے درکار تمام سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔