لاک ڈاؤن: کرایہ نہیں ملنے پر مکان مالک نے گھر سے نکالا، پولس بنی مسیحا

ہندوستان میں کورونا کا بحران بڑھتا ہی جا رہا ہے۔ ایسے ماحول میں پی ایم مودی سمیت سبھی ریاستوں کے وزرائے اعلیٰ ملک کے لوگوں سے غریبوں کی مدد کرنے کی گزارش کر رہے ہیں۔ دہلی کے وزیر اعلیٰ اروند کیجریوال نے بھی مکان مالکوں سے کرایہ داروں کو پریشان نہ کرنے کی بات کہی ہے۔ لیکن اس کے باوجود 500 کلو میٹر دور محنت مزدوری کر کے پیٹ پالنے دہلی آئے غریب فیملی کو مکان مالک نے گھر سے نکال کر باہر کر دیا۔ مکان مالک نے لاکھ منتوں کے بعد بھی بے سہارا غریب فیملی پر رحم نہیں کھایا۔ مکان مالک کی دبنگئی سے دہشت زدہ پردیسی غریب فیملی کا مکھیا گود میں معصوم بچوں اور سر پر سامان کی گٹھریاں لٹکائے ہوئے خواتین کے ساتھ سڑک پر آ گیا۔
یہ واقعہ جمعرات کو قومی راجدھانی دہلی کے کوٹلہ مبارک پور تھانہ حلقہ کا ہے۔ موصولہ اطلاعات کے مطابق متاثرہ فیملی کا مکھیا بچوں سمیت فیملی کے سات لوگوں کے ساتھ پیدل ہی چل کر بارہ پلہ فلائی اوور پر آ پہنچا۔ اسی دوران لاک ڈاؤن ڈیوٹی پر گشت کرتے ہوئے بارہ پلہ فلائی اوور پر کوٹلہ مبارک پور تھانہ کے پولس اہلکار مہاویر سموتا، ویپل کمار اور تیج پال یادو بھی پہنچ گئے۔
پولس والوں نے سنسان سڑک پر چھوٹے بچے کو پیٹھ پر لادے اور سر پر سامان رکھے ہوئے شخص کو دیکھا اور ان کے ساتھ عورتوں کو بھی دیکھا تو روک لیا۔ پوچھ تاچھ کے دوران متاثرہ فیملی نے بتایا کہ انھیں مکان مالک نے نکال دیا ہے کیونکہ وہ مکان کا کرایہ نہیں دے پائے تھے۔ چونکہ لاک ڈاؤن اور کورونا بحران کی وجہ سے انھیں دہلی میں کوئی پناہ دینے والا نہیں ملا، لہٰذا وہ سب یو پی کے ہردوئی ضلع واقع اپنے گاؤں کے لیے پیدل ہی چل پڑے۔
پولس والوں کو جب حقیقت معلوم ہوا تو انھوں نے سب سے پہلے متاثرہ فیملی کے مکان مالک کو فون پر خوب خبر لی۔ پولس اہلکاروں نے جب اسے جیل بھیجنے کے بارے میں بتایا تو مکان مالک کی حالت دگرگوں ہو گئی۔ کوٹلہ مبارک پور تھانہ کے تینوں سپاہیوں نے اس کے بعد متاثرہ فیملی کو کھانا کھلوایا اور انسانیت کا مظاہرہ کرتے ہوئے انھیں ڈی ٹی سی بس میں بٹھا کر کرایہ کے مکان میں واپس پہنچوایا۔
پولس والوں کی سختی سے بے رحم مکان مالک بری طرح خوفزدہ ہو چکا تھا۔ پولس اور قانونی کارروائیوں سے بچنے کے لیے مکان مالک نے متاثرہ فیملی کو گھر میں واپس رہنے کی اجازت دے دی۔ پولس کا خوف اس پر اس قدر طاری تھا کہ متاثرہ فیملی کو گیس سلنڈر اور ایک مہینے کا راشن بھی اس نے مہیا کرایا۔ جب پڑوسیوں کو مکان مالک کے اس بے رحم چہرہ کے بارے میں پتہ چلا تو گلی والوں نے بھی اسے خوب برا بھلا کہا۔ ساتھ ہی متاثرہ غریب فیملی کو روزانہ کی ضرورت کا سامان مہیا کرا کر پڑوسیوں نے یہ بھی کہہ دیا کہ اگر اب مکان مالک ایسا کچھ کرے تو وہ لوگ ایک آواز دیں، سبھی ان کے ساتھ کھڑے نظر آئیں گے۔