بھوک کی وجہ سے پھرکوئی موت ہوئی تولاک ڈاون توڑ کر وزیر اعلیٰ کاکرینگے گھیراو: عارف مسعود

بھوک کی وجہ سے پھرکوئی موت ہوئی تولاک ڈاون توڑ کر وزیر اعلیٰ کاکرینگے گھیراو: عارف مسعود
بھوپال:16اپریل(پریس ریلیز)راجدھانی واقع گیس راحت کالونی میں بروزجمعرات ایک غریب شخص نے معاشی بحران کی وجہ سے خود کوپھانسی پرلٹکالیا،جس سے اس کی موت ہوگئی۔اس موقع پرایم ایل اے عارف مسعود نے معاشی بحران کی وجہ سے متوفی انیل اہروار عرف جیتو کی پھانسی لینے پر افسوس کا اظہار کیاہے۔معلوم ہوکہ جیتو کے دو معصوم بچے ہیں ، ایک 5 سال کی ساکشی اور دوسربیٹی کاویہ جو 3 سال کی ہے۔موجودہ وقت میں وہ گیس راحت کالونی مکان نمبر H 1724-میں رہائش پذیر ہے۔بتایاجاتاہے کہ جیتوسبزی بیچنے کاکام کرتے تھے ، آج انہیں مالی بحران کی وجہ سے پھانسی پر لٹکنے کے لئے مجبورہوناپڑا۔اس واقعہ سے دل برداشتہ ایم ایل اے عارف مسعود نے حکومت کوخبردارکیاہے کہ اگرآئندہ کوئی بھی غریب بھوک کی شدت سے مرتاہے تووہ لاک ڈاو¿ن کی پرواہ کئے بغیروزیراعلیٰ کی رہائش گاہ کاگھیراﺅکریں گے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعلیٰ کوغریبوں کی کوئی فکر نہیں ، مدھیہ پردیش میں حکومت جیسی کوئی چیزہی نہیں ، وزیر اعلی شیوراج سنگھ چوہان خود ہی ون مین شو بنے ہوئے ہیں۔ایم ایل اے عارف مسعود نے کہا ہے کہ مودی اور شیوراج حکومت مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے ، غریب عوام مشتعل ہورہے ہیں ، حکومت عوام سے تعاون مانگ رہی ہے لیکن عوام کو کچھ نہیں دے رہی ہے ، لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے غریب اور متوسط طبقے کے لوگ بہت زیادہ پریشان ہیں۔ مسعود نے اپنے پریس نوٹ میں مزید کہا کہ لاک ڈاو¿ن کرنے سے پہلے حکومت کو غریب عوام کو کھانا مہیا کرنا چاہئے تھا ، لیکن الٹاحکومت عوام سے تعاون کی خواہاں ہے ،جبکہ عوام کےلئے کچھ نہیں کررہی ہے ، جس کی وجہ سے اب لوگ خودکشی کر نے پرمجبورہیں، جوسراسر غلط ہے۔انہوں نے مزیدکہا کہ وزیراعلیٰ کو تمام غریبوں کے لئے کھانا اور ضروری سامان کا انتظام کرنا چاہئے ، غریبوں کو اپنا کنبہ پالنا مشکل ہو رہا ہے ، لوگ گھروں میں بھوکے بیٹھے ہیں ، انہیں بھوک اور پیاس میں ایسا قدم اٹھانے پر مجبور کیا جارہا ہے۔عارف مسعود نے خبردارکرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اب کوئی بھی غریب بھوک سے مرا ، تو وہ لاک ڈاو¿ن کی خلاف ورزی کرنے پرمجبورہونگے اوراس کی پرواہ کئے بغیر وزیر اعلیٰ کاگھیراو¿ کریں گے۔غریبوں کے حق کےلئے آگے آناہوگا۔