انتظامیہ نے خوردونوش کی اشیاءکی فراہمی اورفروخت کےلئے طے کی گائڈلائن

لاک ڈاون 2:
انتظامیہ نے خوردونوش کی اشیاءکی فراہمی اورفروخت کےلئے طے کی گائڈلائن
بھوپال:16اپریل(نیانظریہ بیورو)
لاک ڈاو¿ن کی وجہ سے بھوپال کی اشیائے خوردونوش کا ہول سیل مارکیٹ بھی مکمل طور پر بند تھا ، لیکن اب کئی دنوں سے تاجروں کو راحت مل رہی ہے۔ذرائع کے مطابق لاک ڈاو¿ن سے پہلے بھوپال ڈویزن میں روزانہ چینی کی کھپت 100 ٹن ، آٹے کی کھپت150 ٹن ، دالیں 50 ٹن ، چاول 100 ٹن ، کھلے ہوئے تیل 60 اور پیکنگ آئل 60 ٹن تھی۔ لیکن لاک ڈاو¿ن کے بعد ، کاروبار مکمل طور پر رک گیا تھا۔ جس کی وجہ سے اربوں روپے کا نقصان ہوا۔ جس کے بعد تاجروں اور ضلع انتظامیہ کی میٹنگ میں فیصلہ کیا گیا کہ اشیائے خوردونوش جیسی ضروری چیزوں کی فراہمی کو مسلسل جاری رکھا جائے۔ اس کی وجہ سے ، صبح 8 بجے سے 12بجے تک باہرسے آنے والی گاڑیوں کوخالی کیاجائے گا،وہیں11بجے سے شام 4بجے تک اشیائے خوردونوش کی سپلائی کی جائے گی۔اس کے لئے انتظامیہ نے تھوک فروش کی دکانوں پر کھانے پینے کی اشیا کے دن مقرر کردیئے ہیں۔ اس میں دالیں ، چاول ، پوہا پیر کو فروخت ہوں گے۔ جمعرات کو تیل ، آٹا ، میدہ ، بدھ کو چینی اوردیگرکرانہ کاسامان فروخت کی جاسکتی ہے۔ تاجروں کا خیال ہے کہ آنے والے وقتوں میں جب رمضان المبارک شروع ہوگاوہ بھی لاک ڈاو¿ن میںہی آئے گا ، پھر عید اور دیوالی کا تہوار بھی ہے ، لہذا اشیائے خوردونوش کی طلب میں 30 سے 40 فیصد تک اضافہ ہوگا۔واضح رہے کہ اشیائے خوردونوش کی فروخت اور خریداری لوگوں کی ضرورت ہے۔گزشتہ دنوں سے بندمارکیٹ کی وجہ سے لوگوں کوپریشانی کاسامناہے۔اس لئے انتظامیہ نے روزانہ استعمال میں آنے والے کھانے کی اشیاءفروخت کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔